پاکستان میں تعلیمی گریڈنگ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

درجات دراصل استاد کی طرف سے طالبعلوموں کی کارکردگی کو بتاتا ہے۔ عام طور پر اس کام کے لئے انگریزی کے حرف(A,B,C,D) یا پھر 1 سے 10 تک کے اسکیل پر تعلیمی کارکردگی دکھائی جاتی ہے۔زیادہ تر ممالک میں حرفی درجات کا ہی استعمال کیا جاتا ہے۔

درجات کی فہرست[ترمیم]

A1
گریڈ تفصیل WES مساوی
A
بہترین
B اچھا B
C تسلی بخش C+
D پاس C
F ناکام F
گریڈ فی صد WES مساوی
80% - 100% A پاس
60% - 79% B پاس
50% - 59% C پاس
40% - 49% D پاس
0% - 39% E ناکام

مندرجہ ذیل ڈویژن سکیم پر مشتمل پرانے گریڈنگ نظام میں نمبروں کی فیصد کی حد یہ ہے کہ:

مارکس کا فی صد ڈویژن
60% - 100% پہلا
45% - 59.99% دوسرا
33% - 44.99% تیسرے
0% - 32.99% ناکام

میٹرک اور ڈویژن سکیم میں نمبروں کی فیصد کے مطابق گریڈنگ سسٹم درج ذیل ہے:

مارکس کا فی صد گریڈ تفصیل
80% اور اس سے اوپر A1- 5پوائنٹ غیر معمولی
70% فیصد اور اس سے اوپر، لیکن %80 فیصد سے نیچے A- 4پوائنٹ بہترین
60% فیصد اور اس سے اوپر ہے لیکن %70 فیصد سے نیچے B- 3.5پوائنٹ بہت اچھا
50% فیصد اور اس سے اوپر ہے لیکن %60 فیصد سے نیچے C- 3پوائنٹ اچھا
40% فیصد اور اس سے اوپر لیکن ذیل %50 D- 2پوائنٹ پاس
کم از کم پاس نمبروں کو %40 سے نیچے E- 1پوائنٹ تسلی بخش
33% فیصد سے نیچے والے F- 0پوائنٹ ناکام

ایک اور گریڈنگ پیمانے عام تعلیم میں استعمال کیا جاتا ہے:

مارکس کا فی صد گریڈ تفصیل
80% اور اس سے اوپر A1 غیر معمولی
70% فیصد اور اس سے اوپر، لیکن %80 فیصد سے نیچے A بہترین
60% فیصد اور اس سے اوپر ہے لیکن %70 فیصد سے نیچے B بہت اچھا
50% فیصد اور اس سے اوپر ہے لیکن %60 فیصد سے نیچے C اچھا
40% فیصد اور اس سے اوپر لیکن ذیل %50 D پاس
کم از کم پاس نمبروں کو %40 سے نیچے E تسلی بخش
33% فیصد سے نیچے والے F ناکام

سانچہ:ایشیا