برہان الدین ربانی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
برهان الدين رباني
Burhanuddin Rabbani


در منصب
13 نومبر 2001 – 22 دسمبر 2001
وزیرِ اعظم عبدالغفور روان فرهادی
پیشرو محمد عمر
(سپریم کونسل کے سربراہ)
جانشین حامد کرزئی
در منصب
28 جون 1992 – 27 ستمبر 1996
وزیرِ اعظم عبدالصبور فريد کوهستاني
گلبدين حكمتيار
ارسلا رحماني (قائم مقام)
احمد شاه احمدزی (قائم مقام)
پیشرو صبغت الله مجددي
جانشین محمد عمر
(سپریم کونسل کے سربراہ)

در منصب
27 ستمبر 1996 – 13 نومبر 2001
وزیرِ اعظم گلبدين حكمتيار
عبدالرحیم غفورزی
عبدالغفور روان فرهادی
پیشرو منصب قائم
جانشین منصب ختم

پیدائش 1940
بدخشاں صوبہ, مملکت افغانستان
وفات 20 ستمبر
کابل, افغانستان
سیاسی جماعت جمعیت اسلامی
مادر علمی کابل یونیورسٹی
جامعہ الازہر
مذہب سنی اسلام

برھاندین ربانی (پدائش 1940: 20 ستمبر 2011ء) افغانستان میں سویٹ اتحاد کی شکشت کے بعد قائم ہونے والی حکومت کا صدر ریا۔ صدارت کی مدت ختم ہونے کے باوجود صدارت سے چپکا رہا اور یوں افغان جھگڑے کو طول دینے کا باعث بنا۔ طالبان کی حکومت آنے سے پہلے معزول ہو گیا۔ 2002ء میں افغانستان پر امریکی حملے کی حمایت میں پیش رہا اور حامد کرزئی کا امن چیلا مقرر ہوا۔ ستمبر 2011ء میں کابل میں امریکی سفارتخانے کے باہر خودکش حملے میں کھیت رہا۔[1]

  • انڈپنڈنت، "Burhanuddin Rabbani: Politician who led Afghanistan's High Peace Council and served as president"