اراکان

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

میانمار (برما) کا علاقہ اراکان، روہنگیا مسلمانوں کا آبائی وطن ہےـ ارکان یا اراکان 1784ء تک ایک آزاد ملک تھاـ ارکانی مسلمانوں کا چودھویں اور پندرہویں صدی عیسوی میں آزاد ملک تھا٬ بعد میں برمیوں نے اس پر قبضہ کرلیا تھا. (ٹائمز اٹلس آف ورلڈ ہسٹری صفحہ 133)۔ برما کی فوجی حکومت کے دور میں امتیازی قوانین کے زریعہ مسلمانوں کی زندگی مشکل بنا دی گئ، جائیداد چھینی، شہریت ختم ہو گئ اور وہ بے ریاست لوگ بن گئے۔ مسلمانوں سے بیگار لیا گیا۔ ایسے حالات میں بڑی تعداد تھائی لینڈ اور بنگلہ دیش ہجرت کر گئی۔


جون 2012 میں ارکان میں مسلم کش فسادات شروع ہوئے۔ جس میں بڈھسٹوں نے ہزاروں مسلمانوں کو شہید اور سینکڑوں مسلم آبادیوں کو نذرآتش کردیا۔ جو مسلمان سمندری راستے سے بنگلہ دیش پہنچے انہیں بنگلہ حکومت نے واپس دھکیل دیا جو واپسی میں بڈھسٹوں کے ہاتھوں قتل ہوگئے۔