جوناتھن (کچھوا)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
جوناتھن
Jonathan-plantation-house.jpg
جوناتھن 2021ء میں
نوعدیو قامت سیشلز کچھوا
جنسنر
انڈے سے برآمدت 1832 (عمر 189−190)
سیشیلز
رہائشسینٹ ہیلینا

جوناتھن (پیدائش: ت 1832)[1] ایک دیو قامت سیشلز کچھوا ہے جو دیو قامت الڈیبرا کچھوے کی ایک قسم اور دنیا کے سب سے قدیم مشہور زمینی جانوروں میں سے ایک ہے۔[2][3] جوناتھن جنوبی بحر اوقیانوس میں ایک برطانوی سمندر پار علاقے سینٹ ہیلینا کے جزیرہ پر رہتا ہے۔

زندگی[ترمیم]

جوناتھن کو تقریباً 50 سال کی عمر میں تین دیگر کچھووں سمیت 1882ء میں بحر ہند کے سیشیلز سے سینٹ ہیلینا لایا گیا تھا۔ اس کا نام سینٹ ہیلینا کے گورنر سر اسپینسر ڈیوس نے سنہ 1930ء میں رکھا تھا۔ وہ گورنر کی سرکاری رہائش گاہ پلانٹ ہاؤس کے میدان میں رہتا ہے اور سینٹ ہیلینا کی حکومت اس کی دیکھ بھال کرتی ہے۔

اس کی عمر کا اندازہ یوں لگایا گیا ہے کہ جب وہ 1882ء میں سینٹ ہیلینا لایا گیا تو وہ مکمل طور پر بالغ تھا۔ مکمل طور پر بالغ کا مطلب کم از کم 50 سال ہے، جس کی وجہ سے اس کی پیدائش (انڈے سے برآمد) کا سال 1832ء تصور کیا گیا تھا۔ اصل میں جوناتھن کی ایک تصویر جس کی اصل تاریخ 1902ء سمجھی جاتی تھی، وہ دراصل 1886 کی ہے[4]، جس میں جوناتھن کو سینٹ ہیلینا پہنچنے کے چار سال بعد دکھایا گیا ہے۔ تصویر سے لی جانے والی پیمائش سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ 1886ء میں یقینی طور پر مکمل طور پر بالغ تھا۔

جوناتھن (بائیں طرف) 1886ء میں ایک اور بڑے کچھوے کے ساتھ [4][5]

گنیز ورلڈ ریکارڈز کے مطابق دنیا کے معمر ترین کچھوے کا مصدقہ ریکارڈ توی ملیلا کو حاصل ہے جو 1966ء میں ٹونگا میں 189 سال کی عمر میں فوت ہو گئی۔ اڈویٹا ایک دیو قامت الڈیبرا کچھوا؛ کلکتہ کے زولوجیکل گارڈن، علی پور میں 2006ء میں فوت ہوا، خیال کیا جاتا ہے کہ وہ 255 سال کی عمر تک زندہ رہا؛ لیکن اس کی تصدیق نہیں ہو سکی ہے۔ فروری 2014ء میں، 2014 دولت مشترکہ کھیلوں سے پہلے ملکہ کے بیٹن ریلے کے حصے کے طور پر؛ بیٹن کا دورہ سینٹ ہیلینا کا ہوا، جب گورنر مارک کیپس نے لاٹھی تھامے ہوئے پلانٹ ہاؤس کے میدان میں جوناتھن کے ساتھ ایک تصویر کے لیے پوز کیا تھا۔[6] بی بی سی ریڈیو نے اوقیانوس کی قطار لگانے والی سیلی کیٹل کے سینٹ ہیلینا کے دورہ کے بعد مارچ 2014ء میں ہمارے اپنے نمائندے سے (From Our Own Correspondent) کے ایک قسط میں جوناتھن کو پیش کیا۔[1] سینٹ ہیلینا فائیو پینس کوئن کے پچھلے حصہ میں جوناتھن موجود ہے۔[7] فریڈرک کی جنس [الف]، جس کے دو پسندیدہ کچھوں میں سے ایک کو مادہ سمجھا جاتا ہے (دوسرا ایملی ہے) اور اس کا ساتھی 1991ء سے موضع شک میں تھی جب جزیرے کے سینیر بیطار افسر کیتھرین مان[8] نے اس بات کا اشارہ کیا تھا کہ خول کی خرابی کی وجہ سے پلسٹرون (کچھوے کا ڈھانچہ) تیار نہیں ہو سکتا ہے۔[9] اس کے بعد فریڈرک کی شناخت مرد کے طور پر کی گئی ہے اور اسی کے مطابق اس کا نام تبدیل کر دیا گیا تھا۔[10] جب فریڈرک معائنہ کر رہا تھا، جوناتھن آیا اور اس سارے عمل کے دوران میں اس کا ساتھ نہیں چھوڑا۔[11] دسمبر 2015ء تک جوناتھن کے بارے میں بتایا گیا تھا کہ ”وہ زندہ اور بہتر ہے […] وہ موتیابند سے نابینا ہے، وہ بو کا احساس کھو بیٹھا ہے اور اس طرح کھانا تلاش نہیں کر سکتا (جب کہ اس کے ساتھی کچھوے ایسے نہیں ہیں اور زمین پر گرا ہوا سب سے چھوٹا نوالہ معلوم کرسکتے ہیں) لیکن اس کی قوت سماعت؛ بہتر طریقہ پر برقرار ہے۔“[12] جنوری 2016ء میں بی بی سی نے خبر دی کہ جوناتھن کو ایک نئی غذا دی گئی تھی جس کا مقصد اسے صحت مند رکھنا اور اس کی عمر بڑھانا تھا۔[13] بڑھاپے کی وجہ سے جوناتھن اپنے ساتھی کے ساتھ تقریباً سب کچھ کرتے ہوئے اپنے ایام کاٹ رہا ہے، جس میں کھانا پینا، سونا اور جنسی ضرورت بھی شامل ہیں۔[14]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب Kettle، Sally (13 مارچ 2014). "Meet Jonathan, St Helena's 182-year-old giant tortoise". بی بی سی نیوز. برطانوی نشریاتی ادارہ. اخذ شدہ بتاریخ 4 جنوری 2015. 
  2. Rogers، James (اکتوبر 23, 2017). "The fascinating sex life of Jonathan, the 185-year-old giant tortoise". Fox News. Fox Entertainment Group. اخذ شدہ بتاریخ اپریل 1, 2018. 
  3. Millward، Adam (فروری 27, 2019). "Introducing Jonathan, the world's oldest animal on land at 187 years old". گنیز ورلڈ ریکارڈز. اخذ شدہ بتاریخ جولائی 14, 2020. 
  4. ^ ا ب "St Helena – Joining the Rest of Us". BBC. اخذ شدہ بتاریخ 14 اگست 2018. Earliest known photograph of Jonathan the 182 year old tortoise, taken in 1886 
  5. Hollins، Jonathan (8 اپریل 2016). "Your Opinion Counts" (PDF). The St Helena Independent. اخذ شدہ بتاریخ 29 جولائی 2017.  [مردہ ربط]
  6. "Queen's Baton completes busy time on St Helena" (Press release). جیمز ٹاون، سینٹ ہلینا: Government of سینٹ ہلینا، اسینشن و ترسٹان دا کونیا. 25 فروری 2014. اخذ شدہ بتاریخ 4 جنوری 2015.  Check date values in: |access-date=, |date= (معاونت)
  7. https://www.coinsbook.net/coins/copper-nickel-coin-5-pence-elizabeth-ii-3rd-portrait-small-type-sainthelenaandascension-km-22
  8. https://www.sainthelena.gov.sh/2016/public-announcements/new-recruit-for-veterinary-team/
  9. Rogers، James (23 اکتوبر 2017). "The fascinating sex life of Jonathan, the 185-year-old giant tortoise". Fox News. Fox News Network. اخذ شدہ بتاریخ 26 دسمبر 2018. 
  10. "Jonathan the tortoise". Saint Helena Island Info. اخذ شدہ بتاریخ 18 جولائی 2019.  [self-published source]
  11. Koslowski، Max. "The Oldest Animal In The World Is Probably Gay". HuffPost آسٹریلیا. HuffPost. اخذ شدہ بتاریخ 11 اپریل 2021. 
  12. Turner، John. "Jonathan the tortoise". Saint Helena Island Info. اخذ شدہ بتاریخ 30 جولائی 2020. 
  13. "Giant 183-year-old tortoise given new diet". بی بی سی نیوز. برطانوی نشریاتی ادارہ. 8 جنوری 2016. اخذ شدہ بتاریخ 16 جون 2016. 
  14. Koslowski، Max. "The Oldest Animal In The World Is Probably Gay". HuffPost آسٹریلیا. HuffPost. اخذ شدہ بتاریخ 11 اپریل 2021.