روبن گھوش

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
روبن گھوش
معلومات شخصیت
پیدائش 13 ستمبر 1937 اور 13 ستمبر 1939  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بغداد  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 13 فروری 2016 (79 سال)  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ڈھاکہ  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Iraq.svg عراق  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مذہب مسیحیت
زوجہ شبنم (1964–)  ویکی ڈیٹا پر شریک حیات (P26) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ نغمہ ساز  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اعزازات
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحہ  ویکی ڈیٹا پر آئی ایم ڈی بی - آئی ڈی (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

روبن گھوش پاکستان فلم انڈسٹری کے نامور موسیقار ہیں۔ 70 اور 80 کی دہائی میں مغربی پاکستان اور مشرقی پاکستان میں بننے والی فلموں کے موسیقار ہیں۔ مشہور اداکارہ اداکارہ شبنم ان کی اہلیہ ہیں۔ رابن گھوش بنگلہ دیش میں مقیم تھے اور ان کا انتقال 13 فروری، 2016ء کو ڈھاکہ میں ہوا۔[1]

ابتدائی زندگی[ترمیم]

روبن گھوش کے والد انٹرنیشنل ریڈ کراس سے منسلق تھے۔ ان کی عراق تعیناتی کے دوران 1939ء میں روبن گھوش کی پیدائش ہوئی اور چھ سال کی عمر میں وہ اپنے والدین کے ساتھ بنگال ،ڈھاکہ میں آ کر رہنے لگے۔ یہیں پر ان کو موسیقی میں دلچسبی پیدا ہوئی اور انھوں نے ڈھاکہ سے موسیقی میں تعلیم حاصل کی۔

گھریلو زندگی[ترمیم]

روبن گھوش نے اداکارہ شبنم سے شادی کی اور 1996ء میں وہ اور شبنم پاکستان سے بنگلہ دیش منتقل ہو گئے۔

فلمی کیرئیر[ترمیم]

روبن گھوش نے فلمی گانوں کے لیے موسیقی ترتیب دینے کا آغاز بنگالی فلموں سے کیا۔ 1961ء میں فلم "چندا" ان کے کیرئیر کی پہلی اردو فلم تھی۔ ان کے فنی کیرئیر کی سب سے مشہور فلم آئینہ ہے۔ اس کے علاوہ 'احساس'، 'امنگ'،'چکوری'،'چاہت'،شرافت'،'تلاش' اور 'بندش' کے موسیقار بھی روبن گوش تھے۔'جو ڈر گیا، وہ مر گیا' ان کی آخری پاکستانی فلم تھی۔[2]

نگار اعزاز[ترمیم]

روبن گھوش کو 6 مرتبہ نگار ایوارڈ حاصل کرنے کا اعزاز حاصل ہے۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]