محلول

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
خوردنی نمک کا پانی میں ملاکر نمکین پانی بنانا

کیمیاء میں، محلول (عربی سے ماخوذ۔ انگریزی: Solution) دو یا دو سے زائد چیزوں سے بنے ہمجنسی آمیزے کو کہاجاتا ہے۔

محلول میں جس چیز کی مقدار زیادہ ہوتی ہے اُسے محلّل اور جس کی مقدار کم ہوتی ہے اُسے منحل کہاجاتا ہے۔ سب سے عام محلل پانی ہے۔

کچھ دھاتیں بھی ایک دوسرے میں مل کر محلول بناتی ہیں جنہیں بھرت کہاجاتا ہے۔

محلول کا ارتکاز[ترمیم]

محلول یا محلل میں منحل کی مقدار کی پیمائش محلول کا ارتکاز (concentration of solution) کہلاتا ہے۔

کسی محلول یا محلل کے خاص مقدار میں پائی جانے والی منحل کی مقدار کو محلول کا ارتکاز کہتے ہیں۔

کسی محلول میں منحل اور محلل کی نسبت کو محلول کا ارتکاز کہتے ہیں۔

محلول کے ارتکاز سے مراد یہ ہے کہ محلل میں حل کی جانے والی مقدار میں منحل کی کتنی مقدار بالحاظ کمیت یا حجم موجود ہے۔

مرتکز محلول[ترمیم]

اگر ایسے دو محلول ہوں جن کے مساوی مقدار میں ایک میں منحل کی مقدار زیادہ اور دوسرے میں کم ہو تو زیادہ منحل کی مقدار والے محلول کو مرتکز محلول (concentrate solution) کہتے ہیں۔

غیر مرتکز محلول[ترمیم]

اگر ایسے دو محلول ہوں جن کے مساوی مقدار میں ایک میں منحل کی مقدار زیادہ اور دوسرے میں کم ہو تو کم منحل کی مقدار والے محلول کو غیر مرتکز محلول یا ہلکا محلول (dilute solution) کہتے ہیں۔

مزید دیکھیے[ترمیم]