کامکس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
(مصور قصہ سے رجوع مکرر)
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
کامکس

کامکس داستاں گوئی کا ایک وسیلہ ہے جو صفحے پر تصویروں کا سلسلہ اور اکثر ساتھ کچھ تحریر استعمال کرتا ہے۔ تصویریں عام طور پر مربع یا مستطیل نُما چوکھٹّوں میں سمائی جاتی ہیں، اور کردار اور واقعات دکھاتی ہیں۔ چوکھٹّے صفحے کے آر پار پسارے ہوتے ہیں، اور عام کتاب کے انداز میں پڑھے جاتے ہیں، اوپر سے شروع ہو کر دائیں سے بائیں کو، یا انگریزی وغیرہ میں دوسری سمت۔ اُن کی ترتیب عموماً زمانی ہوتی ہے تاکہ اِس انداز میں جب مشاہدہ کیے جائیں تو ایک قصہ ظاہر ہو۔ اکثر کامکس میں تصویریں کارٹون کے طرز کی ہوتی ہیں۔

تحریر لوگوں کی باتیں، قصہ گوئی، اور آوازوں کے لیے استعمال کی جاتی ہے۔ باتیں عموماً ایک 'سپیچ ببل' میں لکھی جاتی ہیں، جو انڈا نُما روپ کا ہوتا ہے، ایک نوک کے ساتھ جو کونے سے نکلتا ہے اور بات کرنے والے کی طرف ابھرتا ہے۔ آوازیں صوتی الفاظ سے ظاہر کی جاتی ہیں، جیسے کہ 'ٹھک'، 'ٹھا' وغیرہ۔ بیانیہ جملے تصویر کے اوپر یا نیچے کو لکھے ہوتے ہیں، جیسے کہ 'دریں اثنا۔۔۔'، 'بعد میں' وغیرہ۔

کامکس کے کئی مختلف قسم ہوتے ہیں۔ سب سے سادہ قسم ہے کامک سٹرِپ، جو صرف تین چار چوکھٹوں پر مشتمل ہوتے ہیں اور اخباروں میں چھپتے، جہاں وہ خاص طور پر سیاست، حالیہ واقعات، یا مقبول ثقافت سے متعلق طنز و مزاح اڑاتے ہیں۔ طویل تر کامکس زیادہ تر بچوں کے بہلاؤ سے وابستہ کیے جاتے ہیں۔ وہ اکثر کسی خاص قابل محبت کردار کو مضحکہ خیز حالت میں دکھاتے ہیں۔ یہ بچوں کے رسالوں میں شائع کیے جاتے ہیں، اور کئی صفحے لمبے ہوتے ہیں۔ ایک ایسا مشہور انگلستانی رسالہ ہے 'دی بینو' (The Beano)، جس کا ایک مقبول کردار ہے 'ڈینس دی مینس' (Dennis the Menace)، ایک شرارتی بچہ۔

ایک قسم کا کامکس جو نوجوان اور بالغ شائقین اپنا ہدف رکھتا ہے گرافک ناول کہلاتا ہے۔ یہ عموماً مکمل ناول جتنے لمبے ہوتے ہیں، اور زیادہ بالغانہ اور سنجیدہ قصے شامل کرتے ہیں۔ ان میں تصویریں بھی زیادہ نفیس اور تفصیلی ہوتی ہیں۔

امریکہ میں ایک مقبول قسم کا کامکس سوپر ہیرو کامکس ہے۔ ان میں ایسے کردار شامل ہوتے ہیں جن کو ماورائے انسانی طاقتیں حاصل ہوں، مثلاً اڑنے کی سکت، آگ یا برف پر قابو، یا دیو پیکر پٹّھے۔ مشہور مثالیں ہیں سوپرمین (Superman)، سپائڈرمین (Spiderman)، اور ایکس مین (X-Men)۔

جاپان کے کامکس کو 'مانگا' کہا جاتا ہے، اور ان کے یگانہ اور امتیازی طرز کے سبب، وہ عالم بھر میں اسی نام سے معروف ہیں۔ مغرب کے بر عکس، جاپان میں کچھ عرصے سے تمام عمر کے لوگوں کے لیے کامکس شائع کیے گئے ہیں۔ ان کے مختلف زمرے ہیں، مثلاً 'شونین' (shōnen) - لڑکے، 'شوجو' (shōjo) - لڑکیاں، اور 'سینین' (seinen) - مرد۔ جاپان میں فحش کامکس بھی ایک حد تک مقبول ہیں، جن کو 'ہینتائی' (hentai) بولا جاتا ہے۔