ٹنڈو آدم

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ٹنڈو آدم
Tando Adam
شہر
ملک Flag of Pakistan.svg پاکستان
صوبہ سندھ
ضلع سانگھڑ
منطقۂ وقت پاکستان کا معیاری وقت (UTC+5)

ٹنڈوآدم پاکستان کے صوبہ سندھ کا ایک شہر ہے جو ضلع سانگھڑ میں واقع ہے۔ یہ تحصیل ٹنڈوآدم کا صدر مقام بھی ہے۔

اس شہر کی مقامی آبادی میں مہاجر،سندھی، پنجابی، ودیگر زبانیں بولنے والوں کی ایک بڑی تعداد ہے، اس کے علاوہ قیامِ پاکستان کے بعد ہجرت کرنے والے اردو بولنے والی بھی بڑی تعداد میں آباد ہیں۔ شہر کے دیہی علاقوں میں آباد پنجابی اور سرائیکی زبان بھی بولی جاتی ہے۔ ہندوؤں کی نچلی ذات سے تعلق رکھنے والے کولھی اور بھیل بھی مختلف تحصیل ٹنڈوآدم میں آباد ہیں۔

شہر میں چار ہائی اسکول اور ایک کالج ہے جہاں پر ماسٹر کے درجے تک تعلیم دی جاتی ہے۔ ٹنڈوآدم ایک ریلوے جنکشن بھی ہے جو مرکزی ریلوے ٹریک پر واقع ہے۔ یہ شہر قیامِ پاکستان سے قبل ہی ایک کاروباری اور علم پرور شہر رہا ہے۔ یہاں کا شاہی بازار ہمہ وقت شہری اور اطراف کے دیہاتوں کے خریداروں کی آماج گاہ بنا رہتا ہے۔ قیامِ پاکستان سے قبل یہاں سندھی ہندو آباد تھے جو بعد میں ہجرت کرکے انڈیا چلے گئے مگر اب بھی کچھ خاندان ہیں جو رہائش پزیر ہیں اور یہاں کے کاروباری حلقے میں اپنا اثر و رسوخ رکھتے ہیں۔ ،1955تک ٹنڈو آدم ضلع نواب شاہ کا حصہ تھا بعد ازاں اسے ضلع سانگھڑ کا ایک تعلقہ بنا دیا گیا،اس شہر کی بنیاد آٹھارویں صدی میں میر آدم خان نے رکھی تھی، سلیمان خان میڈیکل کالج حیدرآباد روڈ پر سلیمان روشن ہاسپٹل کے نزدیک ہے، یہ ضلع کا صنعتی زون ہے جس کا مرکز جناح روڈ پر ہے، پاور لوم انڈسٹری، ادویات سازی، پیپر پراڈکٹ، کاٹن جیننگ فیکٹریز، ٹیلی کمیونیکیشن انڈسٹریز، یہاں موجود ہے، گورنمنٹ کے کالجز ہائی مڈل و پرائمری

سکوز برائے طلبہ و طالبات بھی ہیں، پرائیویٹ مشہور تعلیمی ادارے یہ ہیں، حاجی روشن دین ہائی سک ول،السعید اسلامی پبلک سکول، سر سید چلڈرن اکیڈ می،سیارہ خانم ہاائی سکول، دی سٹی سکول، دی ایجوکیٹرز، ادی سمارٹ س ل، وغیرہ، حیدرآباد سے 55 کلو میٹر دوری پر ہے شہر کی آبادی 3 لاکھ سے متجاوز جبکہ تحصیل کی آبادی 2017 کے مطابق 5 لاکھ سے کہیں زیادہ۔ شہر میں آبادی کے لحاظ سے پورے سندھ میں سب سے زیادہ حافظ قرآن ہیں۔ ہے

Midori Extension.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کر کے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔