کاسٹک سوڈا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
سوڈیم ہائیڈرو اکسا ئڈ
اسم نظامی

سوڈیم ہائیڈرو اکسا ئڈ

دیگر نام لی، کاسٹک ایسڈ
شناخت
رقم CAS 1310-73-2
بوب کیم 14798  ویکی ڈیٹا پر (P662) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

خواص
مالیکیولر فارمولا NaOH
مولر کمیت 39.9971 گ/مول
ظہور سفید ٹھوس
کثافت 2.1 g/cm³، ٹھوس
نقطة الانصهار 318 °C (591 K)
نقطة الغليان سانچہ:Chembox BoilingPt1
الذوبانية في الماء 111 گ/100 ml (20 °C)
القاعدية (pKb) -2.43
المخاطر
صحيفة بيانات سلامة المادة External MSDS
NFPA 704 سانچہ:NFPA
نقطة الوميض غیر آتش گیر
مركبات متعلقة
الکلی ہائیڈرو اکسائڈ ذات علاقة لیتھئم ہائیڈرہ اسائڈ
پوٹاشیم ہائیڈروآکسائڈ
روبیڈئم ہائیڈرو اکسائڈ
سیزیئم ہائیڈرو اکسائڈ
ماسواۓ کسی خصوصی بیان کے، تمام مادی معطیات
معیاری درجہ حرات و دباؤ یعنی 25°C, 100 kPa
پر دیۓ گۓ ہیں۔
لاتعلقیتِ معلوماتی خانہ و حوالہ جات

کاسٹک سے مراد ایسی چیز ہوتی ہے جو چھو جانے پر بہت ساری اشیاء کو گلا دینے کی خاصیت رکھتی ہے۔ کاسٹک سوڈے سے مراد سوڈیئم ہائیڈرو آکسائیڈ ہوتا ہے جس کا کیمیائی فارمولا NaOH ہوتا ہے۔ یہ دانے دار یا ٹکڑیوں کی شکل میں بازار میں دستیاب ہوتا ہے یا پھر محلول کی حالت میں ملتا ہے۔ یہ الکلائین (Alkaline) ہوتا ہے یعنی تیزابیت کا الٹ۔ ساری الکلی کی طرح اس کا ذائقہ بھی کڑوا ہوتا ہے جبکہ سارے تیزاب کھٹّے ہوتے ہیں۔

کاسٹک سوڈا بہت ساری صنعتوں میں استعمال ہوتا ہے جیسے صابن سازی، کاغذ سازی، کپڑا سازی وغیرہ۔ ساری دنیا میں اس کا سالانہ استعمال 6 کروڑ ٹن سے زیادہ ہے۔

کاسٹک اشیاء کو ظاہر کرنے کی علامت.

بنانے کے طریقے[ترمیم]

صنعتی پیمانے پر کاسٹک سوڈا نمک کے محلول میں سے بجلی گزار کر بنایا جاتا ہے۔ اس عمل میں کلورین اور ہائیڈروجن گیسیں بھی بنتی ہیں۔
کم مقدار میں بنانے کے لیے دھوبی سوڈے کوبجھے ہوئے چونے کے ساتھ ملا کر گرم کیا جاتا ہے۔

خواص[ترمیم]

یہ پانی میں بڑی مقدار میں حل ہو جاتا ہے۔ بڑی حد تک میتھینول اور ایتھینول میں بھی حل ہو جاتا ہے مگر ایتھر جیسے غیر قطبی (Non polar) مایعات میں حل نہیں ہوتا۔ ان بجھے چونے اور گندھک کے تیزاب کی طرح کاسٹک سوڈا بھی پانی ملانے پر سخت گرم ہو جاتا ہے اور اس کے چھینٹے اڑ کر نقصان پہنچا سکتے ہیں۔

اگر کاسٹک سوڈے کے پانی میں محلول میں ہاتھ ڈالا جائے تو یہ صابن کی طرح چکنا محسوس ہوتا ہے۔ اگر زیادہ دیر تک یہ ہاتھ پر لگا رہے یا مرتکز محلول ہو تو کھال گلنے سے زخم پڑ جاتے ہیں۔

خشک کاسٹک سوڈا ہوا سے پانی جذب کر کے گیلا ہو جاتا ہے۔ اسی طرح یہ ہوا سے کاربن ڈائی آکسائیڈ جذب کر کے دھوبی سوڈے میں تبدیل ہو جاتا ہے۔

کاسٹک سوڈا لگنے کے دو دن بعد زخمی ہاتھ.

قیمت[ترمیم]

پاکستان میں کاسٹک سوڈے کی خوردہ قیمت لگ بھگ 90 روپے فی کلو ہے (مئی 2016 کی قیمت)۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

  1. ^ ا ب پ PubChem CID: https://pubchem.ncbi.nlm.nih.gov/compound/14798 — اخذ شدہ بتاریخ: 18 نومبر 2016 — عنوان : SODIUM HYDROXIDE — اجازت نامہ: آزاد مواد
  2. PubChem CID: https://pubchem.ncbi.nlm.nih.gov/compound/14798