ہیثم بن طارق

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ہثیم بن طارق آل سعید
Secretary Pompeo Meets with the Sultan of Oman Haitham bin Tariq Al Said (49565463757) (cropped).jpg
ہثیم بن طارق
سلطان عمان
معیاد عہدہ11 جنوری 2020ء – حال
قابوس بن سعید
شریک حیاتاحد بنت عبد اللہ بن حمد البوسعیدیہ[1]
نسلذی یزن بن ہیثم بن طارق[2]
بلعرب بن ہیثم بن طارق
ثریا بنت ہیثم آل سعید
امیمہ بنت ہیثم بن طارق آل سعید
خاندانآل سعید
والدطارق بن تیمور
والدہشوانہ بنت حمود بن احمد البوسعیدیہ[3]
پیدائش13 اکتوبر 1954ء (عمر 65 سال)
مسقط، سلطنت عمان
مذہباباضی اسلام

ہیثم بن طارق آل سعید (پیدائش: 13 اکتوبر 1954ء) سلطنت عمان کے موجودہ سلطان ہیں۔[4] انہیں 11 جنوری 2020ء کو سابق سلطان قابوس بن سعید بن تیمورآل سعید کی وفات کے بعد ان کا جانشین نامزد کیا گیا۔ اس سے پہلے ان کے پاس سلطنت عمان کی وزارت ثقافت و ورثہ کا قلمدان تھا۔[5][6]

سوانح[ترمیم]

ہثیم بن طارق آل سعید شاہی خاندان کے سربراہ ہیں۔وہ سابق سلطان قابوس بن سعید بن تیمور آل سعید کے سگے چچا کے بیٹے ہیں۔ انہوں نے 1979 میں آکسفورڈ یونیورسٹی سے فارن سروس پروگرام میں گریجویشن کیا۔ ان کے والد طارق بن تیمور تھے جو سلطان تیمور بن فیصل کے بیٹے تھے۔ ان کے بھائی اسعد بن طارق بن تیمور آل سعید نائب وزیر اعظم ہیں۔ہیثم بن طارق آل سعید بھائیوں میں سب سے چھوٹے ہیں۔

مناصب[ترمیم]

کھیلوں کے دلدادہ ہیثم 1980ء کی دہائی کے اوائل میں عمان فٹ بال ایسوسی ایشن کے پہلے سربراہ رہے۔[7]وہ 1986 سے لیکر 1994 تک وزارت خارجہ کے سیاسی امور کے انڈر سیکریٹری رہے۔ اور اس کے بعد 1994 سے 2002 تک وزارت خارجہ کے جنرل سیکریٹری کے عہدے پر فائز رہے۔[8][9]انہیں مارچ 2002 میں وزارت ثقافت و ورثہ کا قلمدان سونپا گیا۔ وہ 2003 میں عمان کے قومی مردم شماری کمیشن کے سربراہ بھی رہے۔[10]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Royal Ark
  2. Royal Ark
  3. Royal Ark
  4. "Oman's new ruler Haitham bin Tariq takes oath: newspapers". Reuters (بزبان انگریزی). 11 January 2020. اخذ شدہ بتاریخ 11 جنوری 2020. 
  5. "Cabinet of Ministers". Oman News Agency. 31 مارچ 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 31 مارچ 2015. 
  6. Appointing a Minister of Heritage and Culture, Royal Decree No11/2002, issued on February 14, 2002, published in issue 713 of the Official Gazette
  7. "New Oman ruler chosen by agreement, or secret letter". France 24 (بزبان انگریزی). 11 January 2020. اخذ شدہ بتاریخ 11 جنوری 2020. 
  8. Oman، Ministry of Legal Affairs (1986). Royal Decree No. 2/86. Official Gazette. 
  9. Oman، Ministry of Legal Affairs (1994). Royal Decree No. 110/94. Official Gazette. 
  10. Valeri، Marc (2009). Oman: Politics and Society in the Qaboos State (بزبان انگریزی). C. Hurst. صفحات 97, 124. ISBN 978-1-85065-933-4. اخذ شدہ بتاریخ 12 جنوری 2020.