نکیتا خروشیف

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

Nikita Khrushchev

نکیتا خروشیف

پیدائش: 1894ء

انتقال: 1971ء

روسی سیاستدان ۔ یوکرین کے سرحدی علاقے میں ایک مزدور خاندان میں پیدا ہوئے۔ والد ایک کان میں کام کرتے تھے۔ ابتدائی زندگی میں مویشی چرائے۔ اس کے بعد یوکرین کی ایک فیکڑی میں ملازم ہوگئے۔ پہلی جنگ عظیم کے دوران روسی فوج میں بھرتی ہوئے۔ جنگ کے اواخر میں کیمونسٹ پارٹی میں شامل ہوگئے اور سرخ فوج میں شامل ہو کر زار کے خلاف جنگوں میں حصہ لیا۔ 1921ء میں یوکرین چلے گئے اور لوہے کے کانوں میں کام کرنے کے ساتھ ہائی سکول میں داخلہ بھی لے لیا۔ 1929ء سے 1931ء تک ماسکو کی صنعتی اکیڈیمی میں تعلیم پائی۔ بعد ازاں ماسکو کی علاقائی کمیٹی کے فرسٹ سیکرٹری ہوگئے۔ اس کمیٹی کے سپرد اس علاقے کے صنعتی ترقی اور ماسکو کی زیر زمین ریل کی تعمیر کا کام تھا۔ اس سلسلے میں انہیں آرڈر آف لینن کا اعزاز دیاگیا۔

1937ء میں سوویٹ پارلمینٹ کے ممبر منتخب ہوئے۔ اور 1938ء میں یوکرین کی کمیونسٹ پارٹی کے فرسٹ سیکریڑی مقرر کیے گئے۔ 1941ء میں جب نازی جرمنی نے روس پر حملہ کیا تو خروشیف نے یوکرین میں گوریلا دستوں کو منظم کیا اور جرمن فوجوں کو بھاری نقصان پہنچایا۔ 1949ء میں روس میں زرعی کام کی نگرانی کا کام سنبھالا ۔ 1953ء میں مارشل اسٹالن کی وفات کے بعد کمیونسٹ پارتی کے فرسٹ سیکرٹری مقرر ہوئے اور مارچ 1958ء میں مارشل بلگان کے مستعفی ہونے کے بعد وزیراعظم کے عہدے پر فائز ہوئے۔ 1964ء میں ریٹائر ہو گئے۔ نہایت منھ پھٹ لیکن نہایت ذہین اور خوش مزاج تھے۔ اس کے عہد میں روس کی داخلی اور خارجی پالیسیوں میں نرمی پیدا ہوئی۔ امریکا سے تعلقات قدرے بہتر ہوگئے لیکن چین کے ساتھ خراب ہوگئے۔ چین نے ان پر ’’ترمیم پسندی‘‘ اور امریکا کی بے جا خوشامد کا الزام لگایا۔