ارمان (فلم)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ارمان
ARMAAN.jpg
ارمان
ہدایت کار پرویز ملک
پروڈیوسر وحید مراد
تحریر وحید مراد
منظر نویس پرویز ملک
ستارے وحید مراد
زیبا
ظہور احمد
نرالا
بیبو
روزینہ
موسیقی سہیل رانا
سنیماگرافی سہیل نجمی
پروڈکشن
کمپنی
فلم آرٹس پریزنٹیشن
تاریخ اشاعت
  • مارچ 18، 1966 (1966-03-18)
دورانیہ
3 گھنٹے
ملک Flag of پاکستان
زبان اردو

ارمان (انگریزی: Armaanاردو زبان میں ریلیز ہونے والی 1966ء کی پلاٹینم جوبلی بلیک اینڈ وائیٹ پاکستانی فلم تھی۔[1]۔ اس فلم کو سال 1966ء کی بہترین فلم کا نگار ایوارڈ ملا۔ ارمان پاکستان کی پہلی اردو فلم تھی جس نے اپنی نمائش کے 75 ہفتے مکمل کر کے پہلی پلاٹینم جوبلی فلم کا اعزاز حاصل کیا۔ اس فلم کی خاص بات یہ تھی کہ اس کے فلمساز و مصنف وحید مراد تھے، جبکہ ہدایت کار پرویز ملک، موسیقار سہیل رانا اور نغمہ نگار مسرور انور تھے۔[2]

اس فلم کی کامیابی میں سہیل رانا کی موسیقی کا بڑا دخل تھا، اس فلم کے گیتوں نے رلیز ہوتے ہی پورے برصغیر میں دھوم مچا دی۔ فلم ارمان نے مقبولیت کے نئے ریکارڈ قائم کرنے کے ساتھ ساتھ 1966ء میں سب سے زیادہ نگار ایوارڈ حاصل کیے۔[2]

اداکار[ترمیم]

موسیقی[ترمیم]

اس فلم کی موسیقی سہیل رانا نے ترتیب دی جبکہ نغمات مسرور انور نے تحریر کیے۔ اس فلم میں احمد رشدی، خورشید شیرازی اور مالا نے اپنی آواز کا جادو جگایا۔[1]

نغمات[ترمیم]

نمبر شمار گانا نغمہ نگار گلوکار / گلوکارہ
1 اکیلے نہ جانا ہمیں چھوڑ کر تم مسرور انور احمد رشدی
2 اکیلے نہ جانا ہمیں چھوڑ کر تم مسرور انور مالا
3 میری قسمت بتا، میری کیا ہے خطا مسرور انور مالا
4 کو کو کورینا مسرور انور احمد رشدی
5 جب پیار میں دو دل ملتے ہیں مسرور انور احمد رشدی
6 زندگی اپنی تھی اُڑتے بادل کی طرح مسرور انور خورشید شیرازی، احمد رشدی[1]

اعزازات[ترمیم]

ارمان نے مجموعی طور پر 6 نگار ایوارڈ حاصل کیے۔ یہ ایوارڈ جن شعبوں میں حاصل کیے ان میں [2]:

نمبر شمار شعبہ نام ایوارڈ کا نام
1 بہترین اردو فلم سال 1966ء وحید مراد نگار ایوارڈ
2 بہترین ہدایت کار پرویز ملک نگار ایوارڈ
3 بہترین اداکارہ زیبا نگار ایوارڈ
4 بہترین موسیقار سہیل رانا نگار ایوارڈ
5 بہترین پس پردہ گلوکار احمد رشدی نگار ایوارڈ
6 بہترین مزاحیہ اداکار نرالا نگار ایوارڈ

حوالہ جات[ترمیم]