عمر خضر

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
عمر خضر

عمر خضر کینیڈا کے ایک مسلمان رہائشی ہیں جنہیں گوانتانامو تھانے میں بند کیا گیا تھا۔ ان کے والد احمد سعید خضر کو بھی گرفتار کر کہ بند کیا ہوا تھا۔

عمر خصر، امریکی فوجی نے پشت میں دو گولیاں ماریں

امریکا میں نئے صدر اوبامہ کے عہدہ سنبھالنے کے بعد اپریل 2009ء میں کینیڈای عدالت نے سرکار کو حکم دیا کہ وہ عمر کو امریکا سے واپس حاصل کرے مگر کینیڈای وزیر اعظم سٹیفن ہارپر عدالت کا حکم ماننے سے انکاری ہے۔[1] کینیڈی حکومت معاملے کو مرکزی عدالت میں لے گئی اور منصف سے کہا کہ عدالتیں اس میں مداخلت مت کریں۔[2]

2009 میں ٹورانٹو سٹار نے تجزیہ میں بتایا کہ نئی تصاویر سے اس نظریہ کو تقویت ملتی ہے کہ عمر خضر پر الزامات جھوٹے ہیں۔[3]

اکتوبر 2010ء میں امریکی اور کنیڈائی حکومت کی ملی بھگت سے عمر سے امریکی فوجی عدالت کے سامنے اعترافی بیان کرایا گیا اور سزا سنا دی گئی۔[4] مبصرین نے یہ واضح کیا ہے کہ کسی فوجی کو جنگ میں حصہ لینے پر مجرم نہیں قرار دیا جا سکتا۔[5]

مزید[ترمیم]

بیرونی روابط[ترمیم]

  1. 24 اپریل 2009ء، "PM rejects court order to seek Khadr’s release "
  2. G&B, 25 جون 2009ء, "Leave Khadr decisions to PMO and cabinet, Ottawa tells courts "
  3. ٹورانٹو سٹار 29 اکتوبر 2009، "Substantial likelihood of conviction"
  4. wsws, 30 اکتوبر 2010ء، "Canada’s role in the persecution of child soldier Omar Khadr"
  5. ٹورانٹو ستار، 30 اکتوبر 2010ء، "Walkom: Omar Khadr's Guantanamo show trial"