ولیم جیمس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ولیم جیمس
(انگریزی میں: William James ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
William James b1842c.jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش 11 جنوری 1842[1][2][3][4][5][6][7]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
P19
وفات 26 اگست 1910 (68 سال)[1][2][3][4][5][6][9]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ٹیمورتھ، نیو ہیمپشائر  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجہ وفات عَجزِ قلب  ویکی ڈیٹا پر (P509) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مدفن P119
طرز وفات P1196
شہریت Flag of the United States (1795-1818).svg ریاستہائے متحدہ امریکا[11]  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رکن P463
زوجہ P26
اولاد P40
والد P22
والدہ P25
بہن/بھائی P3373
عملی زندگی
مادر علمی P69
استاذ P1066
ڈاکٹری طلبہ P185
تلمیذ خاص P802
پیشہ P106
پیشہ ورانہ زبان انگریزی[16]  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شعبۂ عمل فلسفہ،  اورنفسیات  ویکی ڈیٹا پر (P101) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ملازمت ہارورڈ یونیورسٹی  ویکی ڈیٹا پر (P108) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
کارہائے نمایاں P800
مؤثر P737
تحریک P135

امریکی فلسفی۔ ہنری جیمز سینئر جو خود فلسفی اور ماہر نفسیات تھا، کا بیٹا اور ناول نگار ہنری جیمز جونیئر کا بھائی نیو یارک میں پیدا ہوا۔ 1870ء میں ہارورڈ یونیورسٹی سے ایم۔ ڈی کی ڈگری حاصل کی اور وہیں تمام عمر تشریح الابدان، عضویات، نفسیات اور فلسفے کی تعلیم دیتا رہا۔ اس کے نزدیک خیالات اشیا کی تخلیق نہیں کرتے بلکہ ان کی تخلیق کے لیے راہ ہموار کرتے ہیں۔ علم تومحض آلہ کار ہے اصل اہمیت ارادے اور عمل کو حاصل ہے۔


ولیم جیمز ۔ ماہرِ نفسیات اور فلسفی ۔ نتائجیت (Pragmatism) کے بانی کی حیثیت سے اسے بڑی شہرت ملی جس سے ولیم جیمز امریکی فلسفے کی شناخت بن گیا۔ ولیم جیمز کی کتاب "The Varities of Religious Experience" کا اُردو ترجمہ علامہ اقبال کے ایما پر ہی ڈاکٹر خلیفہ عبدالحکیم نے ’’وارداتِ نفسیاتِ روحانی‘‘ کے نام سے کیا۔ علامہ اقبال نے ولیم جیمز کا ذکر اپنی انگریزی بیاض اور خطبات میں بھی کیا ہے۔ ولیم جیمز کی نتائجیت اور اس کے نفسیات کے مطالعے پر اقبال نے کوئی نقد نہیں کیا بلکہ انھیں مشاہدہ باطن اور مذہبی واردات کے حوالے سے پزیرائی دی‘ جبکہ مغرب میں بعد میں کچھ لوگوں نے اس کو ہدفِ تنقید بنایا۔ ولیم جیمز کا انتقال 26 اگست 1910ء کو ہوا۔ [17]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب ربط : https://d-nb.info/gnd/118556851  — اخذ شدہ بتاریخ: 26 اپریل 2014 — اجازت نامہ: CC0
  2. ^ ا ب http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb12034524d — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  3. ^ ا ب دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/William-James — بنام: William James — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  4. ^ ا ب ایس این اے سی آرک آئی ڈی: https://snaccooperative.org/ark:/99166/w6s46skr — بنام: William James — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  5. ^ ا ب فائنڈ اے گریو میموریل شناخت کنندہ: https://www.findagrave.com/memorial/540 — بنام: William James — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  6. ^ ا ب Babelio author ID: https://www.babelio.com/auteur/wd/59136 — بنام: William James — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  7. Brockhaus Enzyklopädie online ID: https://brockhaus.de/ecs/enzy/article/james-william-20 — بنام: William James
  8. ربط : https://d-nb.info/gnd/118556851  — اخذ شدہ بتاریخ: 11 دسمبر 2014 — اجازت نامہ: CC0
  9. InPhO ID: https://www.inphoproject.org/thinker/3307 — بنام: William James — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  10. فائنڈ اے گریو میموریل شناخت کنندہ: https://www.findagrave.com/memorial/540 — اخذ شدہ بتاریخ: 11 نومبر 2021
  11. https://libris.kb.se/katalogisering/qn245bz84tzvzsp — اخذ شدہ بتاریخ: 24 اگست 2018 — شائع شدہ از: 18 ستمبر 2012
  12. https://www.encyclopedia.com/women/encyclopedias-almanacs-transcripts-and-maps/james-alice-gibbens-1849-1922 — اخذ شدہ بتاریخ: 11 نومبر 2021
  13. https://www.google.com/books/edition/Understanding_Religious_Pluralism/PaINBQAAQBAJ?hl=en&gbpv=1&pg=PA164
  14. https://www.google.com/books/edition/Understanding_Religious_Pluralism/PaINBQAAQBAJ?hl=en&gbpv=1&pg=PA164
  15. مکمل کام یہاں دستیاب ہے: https://www.bartleby.com/library/bios/ — عنوان : Library of the World's Best Literature
  16. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb12034524d — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  17. (تحریر و تحقیق: میاں ساجد علی‘ علامہ اقبال سٹمپ سوسائٹی)