آئی اے ایس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
بھارتی انتظامی خدمات
خدمات کا جائزہ
IAS (Central Association) logo.jpeg
یوگا: योगः कर्मसु कौशलम् (سنسکرت)
"یوگا کا مطلب کام میں عمدگی ہے"
قائم کردہ1858؛ 163 برس قبل (1858)
آئی اے ایس
26 جنوری 1950؛ 71 سال قبل (1950-01-26)
ملکFlag of India.svg بھارت
اسٹاف کالجلال بہادر شاستری نیشنل اکیڈمی آف ایڈمنسٹریشن، مسوری، اتراکھنڈ
کیڈر کنٹرولنگ اتھارٹیمحکمہ عملہ و تربیت ، وزارت عملہ، عوامی شکایات و پنشن، حکومت ہند
وزیر ذمہ دارنریندر مودی، وزیر اعظم بھارت اور وزیر برائے عملہ ، عوامی شکایات اور پنشن
قانونی شخصیتحکومتی; سول سروس
فرائض
عملہ کی طاقت4،926 ممبران (یونین پبلک سروس کمیشن کے ذریعہ 3،511 افسران براہ راست بھرتی ہوئے اور ریاستی سول خدمات سے ترقی پذیر 1،415   افسران)[1][2]
انتخابسول سروس اگزیمنیشن
انجمنآئی اے ایس(مرکزی) انجمن
Emblem of India.svg
سلسلہ مضامین
سیاست و حکومت
بھارت

بھارتی انتظامی خدمات یا آئی اے ایس آل انڈیا سروسز کا انتظامی بازو اور دفتری حکومت کی عوامی خدمت پر مشتمل محکمہ ہے۔[3] بھارت کی اولین سول سروس سمجھی جاتی ہے۔[3][4] آئی اے ایس بھارتی پولیس سروس اور بھارتی جنگلاتی خدمات کے ساتھ ساتھ آل انڈیا سروسز کے تین ہتھیاروں میں سے ایک ہے۔ ان تینوں خدمات کے ارکان بھارتی حکومت کے ساتھ ساتھ انفرادی ریاستوں کی خدمت کرتے ہیں۔ آئی اے ایس افسران کو عوامی شعبے کے مختلف کاموں میں بھی تعینات کیا جاسکتا ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

Midori Extension.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کر کے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔
  1. "بھارتی ایڈمنسٹریٹو سروس کی کیڈر کی مضبوطی (AS ON 01.01.2017)" (PDF). محکمہ عملہ و تربیت ، حکومت ہند. 1 جنوری 2017. 17 مئی 2017 میں اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 21 جنوری 2018. 
  2. ^ ا ب "Service Profile for the Indian Administrative Service" (PDF) (بزبان انگریزی). Department of Personnel and Training, حکومت ہند. 09 اگست 2017 میں اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 13 اگست 2017. 
  3. Tummala، Krishna Kumar (1996). Public Administration in India. ممبئی: Allied Publishers. صفحات 154–159. ISBN 978-8170235903. OCLC 313439426.