اینا ہیریسن

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
اینا ہیریسن
(انگریزی میں: Anna Harrison ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Anna Symmes Harrison.jpg
 

مناصب
خاتون اول ریاست ہائے متحدہ   ویکی ڈیٹا پر (P39) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
برسر عہدہ
4 مارچ 1841  – 4 اپریل 1841 
Fleche-defaut-droite-gris-32.png انجلیکا سنگلٹن وان بورین 
لیٹیشیا کرسچن ٹائلر  Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
معلومات شخصیت
پیدائشی نام (انگریزی میں: Anna Tuthill Symmes ویکی ڈیٹا پر (P1477) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیدائش 25 جولا‎ئی 1775[1][2][3][4][5][6]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مورس ٹاؤن[5]  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 25 فروری 1864 (89 سال)[1][2][3][4][6]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
نارتھ بینڈ، اوہائیو  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مدفن ولیم ہنری ہیریسن ٹومب اسٹیٹ میموریل  ویکی ڈیٹا پر (P119) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of the United States (1795-1818).svg ریاستہائے متحدہ امریکا  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شریک حیات ولیم ہنری ہیریسن (22 نومبر 1795–4 اپریل 1841)[7][8]  ویکی ڈیٹا پر (P26) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اولاد جان اسکاٹ ہیریسن،  کارٹر بیسیٹ ہیریسن[9]،  ایلزبتھ باسیٹ ہیریسن[9]،  جان کلیوس سیمز ہیریسن[9]،  لوسی سنگلٹن ہیریسن[9]،  ولیم ہنری ہیریسن[9]،  بینجمن ہیریسن[9]،  میری سیمز ہیریسن[9]،  اینا ٹوتھل ہیریسن[9]،  جیمز فائنڈلی ہیریسن[9]  ویکی ڈیٹا پر (P40) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
والد جان کلیوس سیمیز  ویکی ڈیٹا پر (P22) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
والدہ اینا ٹوتھل  ویکی ڈیٹا پر (P25) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ سیاست دان،  بردہ دار[10]  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شعبۂ عمل ریاستہائے متحدہ کے خواتین اول کی فہرست  ویکی ڈیٹا پر (P101) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
دستخط
Anna Harrison Signature.svg
 

اینا ہیریسن (انگریزی: Anna Harrison) صدر ریاستہائے متحدہ امریکا ولیم ہنری ہیریسن کی اہلیہ، جان سکاٹ ہیریسن کی والدہ، اور صدر ریاستہائے متحدہ امریکا بنجمن ہیریسن کی دادی تھیں۔ وہ 1841ء میں اپنے شوہر کی ایک ماہ کی میعاد کے دوران میں برائے نام طور پر ریاستہائے متحدہ امریکا کی خاتون اول تھیں، حالانکہ وہ کبھی بھی وائٹ ہاؤس میں داخل نہیں ہوئیں۔ اپنے شوہر کی صدارتی مدت کے آغاز پر 65 سال کی عمر میں، اینا ہیریسن خاتون اول کا کردار سنبھالنے والی اب تک کی سب سے معمر خاتون تھیں، یہ ریکارڈ اس وقت تک قائم تھا جب تک کہ جل بائیڈن 2021ء میں 69 سال کی عمر میں خاتون اول نہیں بنیں۔ انہیں یہ اعزاز بھی حاصل ہے کہ وہ خاتون اول کا اعزاز سب سے کم وقت کے لیے اپنے پاس رکھنے والی ہیں اور یہ اعزاز اپنے پاس رکھتے ہوئے بیوہ ہونے والی پہلی خاتون اول ہیں۔ ہیریسن برطانوی امریکا میں پیدا ہونے والی آخری خاتون اول تھیں۔

ابتدائی زندگی اور شادی[ترمیم]

اینا ٹوتھل سیمز 25 جولائی 1775ء کو مورس ٹاؤن، نیو جرسی میں جج جان کلیوس سیمز اور اینا ٹوتھل کے ہاں پیدا ہوئیں۔ [11] اس کے والد نیو جرسی سپریم کورٹ کے چیف جسٹس تھے اور بعد میں جنوب مغربی اوہائیو میں ایک ممتاز زمیندار بن گئے۔ 1776ء میں جب اس کی والدہ کا انتقال ہو گیا تو اس کے والد نے ایک برطانوی فوجی کا بھیس بدل کر اینا کو برطانوی خطوط پر گھوڑے پر سوار لانگ آئی لینڈ پر اس کے دادا دادی کے پاس لے گئے، جنہوں نے جنگ کے دوران میں اس کی دیکھ بھال کی۔ اس کے والد نیو جرسی کی صوبائی کانگریس (1775ء-1776ء) کے نائب، انقلاب کے دوران میں سسیکس کاؤنٹی کمیٹی آف سیفٹی کے چیئرمین، اور کانٹی نینٹل کانگریس (1785ء-1786ء) کے نیو جرسی کے مندوب بھی تھے۔

وہ لانگ آئی لینڈ پر پلی بڑھی، اس نے اس زمانے کی عورت کے لیے غیر معمولی طور پر وسیع تعلیم حاصل کی۔ اس نے لانگ آئلینڈ پر ایسٹ ہیمپٹن میں کلنٹن اکیڈمی اور نیو یارک شہر میں ازابیلا گراہم کے نجی اسکول میں تعلیم حاصل کی۔

1794ء میں اینا اپنے والد اور نئی سوتیلی ماں، سوسنہ لیونگسٹن کے ساتھ نیو جرسی کے گورنر ولیم لیونگسٹن کی بیٹی کے ساتھ اوہائیو کے بیابان میں چلی گئی، جہاں وہ نارتھ بینڈ، اوہائیو میں آباد ہوئے۔ 1795ء کے موسم بہار میں لیکسنگٹن، کینٹکی میں رشتہ داروں سے ملنے کے دوران، اس کی ملاقات لیفٹیننٹ ولیم ہنری ہیریسن سے ہوئی، جو فوجی کاروبار کے سلسلے میں قصبے میں تھی۔ ہیریسن قریبی فورٹ واشنگٹن میں تعینات تھا۔ ینا کے والد نے ہیریسن کو پوری طرح سے ناپسند کیا، بڑی حد تک کیونکہ وہ اپنی بیٹی کو آرمی کیمپ کی زندگی کی مشکلات سے بچانا چاہتے تھے۔ اس کے حکم کے باوجود کہ دونوں ایک دوسرے کو دیکھنا چھوڑ دیں، اس کی پیٹھ کے پیچھے صحبت پروان چڑھی۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/Anna-Harrison — بنام: Anna Harrison — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  2. ^ ا ب ایس این اے سی آرک آئی ڈی: https://snaccooperative.org/ark:/99166/w6z89r51 — بنام: Anna Harrison — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  3. ^ ا ب فائنڈ اے گریو میموریل شناخت کنندہ: https://www.findagrave.com/memorial/19596 — بنام: Anna Tuthill Harrison — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  4. ^ ا ب دا پیرایج پرسن آئی ڈی: https://wikidata-externalid-url.toolforge.org/?p=4638&url_prefix=https://www.thepeerage.com/&id=p32287.htm#i322868 — بنام: Anna Tuthill Symmes — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — مصنف: ڈئریل راجر لنڈی — خالق: ڈئریل راجر لنڈی
  5. ^ ا ب https://en.wikisource.org/wiki/Woman_of_the_Century/Anna_Symmes_Harrison
  6. ^ ا ب GeneaStar person ID: https://www.geneastar.org/genealogie/?refcelebrite=symmesa — بنام: Anna Harrison
  7. دا پیرایج پرسن آئی ڈی: https://wikidata-externalid-url.toolforge.org/?p=4638&url_prefix=https://www.thepeerage.com/&id=p32287.htm#i322868 — اخذ شدہ بتاریخ: 13 دسمبر 2021
  8. Geni.com profile ID: https://www.geni.com/profile/index/6000000000977706307 — اخذ شدہ بتاریخ: 13 دسمبر 2021
  9. مصنف: ڈئریل راجر لنڈی — خالق: ڈئریل راجر لنڈی
  10. https://www.washingtonpost.com/history/interactive/2022/congress-slaveowners-names-list/
  11. "Anna Harrison". Encyclopædia Britannica. اخذ شدہ بتاریخ جون 2, 2019.