شہباز بھٹی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
شہباز بھٹی
ملف:Shahbazbhatti.jpg
وفاقی وزیر برائے اقلیتی امور
عہدہ سنبھالا
2 نومبر 2008 – 2 مارچ 2011
صدر آصف علی زرداری
وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی
پیشرو Muhammad Ijaz-ul-Haq
جانشین Paul Bhatti[1]
ذاتی تفصیلات
پیدائش 9 ستمبر 1968 (1968-09-09)[2]
لاہور، پاکستان[2]
وفات 2 مارچ 2011 (عمر 42 سال)
اسلام آباد، پاکستان
قومیت پاکستانی
سیاسی جماعت پاکستان پیپلز پارٹی
مذہب رومن کیتھولک

شہباز بھٹی (ستمبر 9، 1968اسلام آباد مارچ 2، 2011)، پاکستانی مسیحی رومن کیتھولک، جو پاکستان پیپلز پارٹی سے وابستہ رہا اور وفاقی وزیر اقلیتی امور رہا۔ سلمان تاثیر قتل واقع کے بعد ٹی وی چینلز پر قانون توہین رسالت سے متعلق مخالفانہ بیان دینے پر مبینہ طور پر اس وجہ سے قتل کیا گيا۔تحریک طالبان پاکستان نے اس کی ہلاکت کی ذمہ داری قبول کی ہے۔[3]

بیرونی روابط[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ "Recognize martyrs around the world by canonizing one of their own". ncronline.org. Retrieved 6 ستمبر 2012.  Check date values in: |access-date= (help)
  2. ^ 2.0 2.1 خطا در حوالہ: حوالہ بنام dawn کے لیے کوئی متن فراہم نہیں کیا گیا ().
  3. ^ http://www.bbc.com/news/world-south-asia-12617562