ولیم منٹگمری واٹ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
The Reverend Professor
ولیم منٹگمری واٹ
واٹ (بائیں جانب)، علی اکبر عبد الراشدی کو  انٹرویو دیتے ہوئے
واٹ (بائیں جانب)، علی اکبر عبد الراشدی کو انٹرویو دیتے ہوئے

معلومات شخصیت
پیدائش 14 مارچ 1909[1]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
وفات 24 اکتوبر 2006 (97 سال)[2][1][3]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
ایڈنبرگ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
قومیت سکاٹش
مذہب مسیحی
فرقہ انگلیکانیت
عملی زندگی
پیشہ مؤرخ،استاد جامعہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ ورانہ زبان انگریزی[4]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں زبانیں (P1412) ویکی ڈیٹا پر

ولیم منٹگمری واٹ (انگریزی: William Montgomery Watt) (مارچ 1909ء – 24 اکتوبر 2006ء) سکاٹش مؤرخ، مستشرق اور انگلیکانیت پادری اور پروفیسر تھے۔ 1964 تا 1979 تا جامعہ ایڈنبرگ میں عربی زبان اور اسلامیات کا پروفیسر رہے۔

واٹ مغرب میں اسلام کے اہم ترین غیر مسلم مفسرین میں سے ایک تھے۔ انھوں نے اسلام، قرآن اور محمد صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم پر کئی اہم کتابیں لکھیں، جن میں: محمد مکہ میں (1953) اور محمد مدینہ میں (1956)، جو سیرت کے میدان میں کلاسیکی تصور کی جاتی ہیں۔[5]

ابتدائی زندگی[ترمیم]

واٹ کی ولادت سیرس، فائف سکاٹ لینڈ میں 41 مارچ 1909ء کو ہوئی۔[6] وہ چودہ ماہ کے تھے کہ والد کی وفات ہو گئی۔ واٹ کے والد چرچ آف سکاٹ لینڈ کے منسٹر تھے۔[5][6]

منتخب کام[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ 1.0 1.1 اجازت نامہ: سی سی زیرو
  2. http://web.archive.org/web/20070930023714/http://www.iranmania.com/News/ArticleView/Default.asp?NewsCode=46952&NewsKind=Current%20Affairs — سے آرکائیو اصل
  3. اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  4. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb119289340 — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  5. ^ 5.0 5.1 نقص حوالہ: ٹیگ <ref>‎ درست نہیں ہے؛ obit - Independent نامی حوالہ کے لیے کوئی مواد درج نہیں کیا گیا۔ (مزید معلومات کے لیے معاونت صفحہ دیکھیے)۔
  6. ^ 6.0 6.1 Holloway، Richard (14 November 2006)۔ "William Montgomery WattThe Guardian۔ http://www.theguardian.com/news/2006/nov/14/guardianobituaries.highereducation۔ اخذ کردہ بتاریخ 1 June 2016۔ 

بیرونی روابط[ترمیم]