ابو عبد اللہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
ابو عبد اللہ
غرناطہ کا سلطان
دور ۱۴۸۲–۱۴۸۳; ۱۴۸۷ – جنوری ۲, ۱۴۹۲ء
پیشرو مولائے ابو الحسن
جانشین کوئی نہیں، سلطنت کا خاتمہ
والد مولائے ابو الحسن
والدہ اکسا
پیدائش ۱۴۶۰
الحمرا, غرناطہ
وفات ۱۵۳۳
مذہب اسلام
ابو عبد اللہ عیسائیوں کے سامنے ہتھیار ڈالتے ہوئے

ابو عبد اللہ (مکمل نام: ابو عبد اللہ محمد الثانی عشر) (۱۴۶۹ء-۱۵۳۳ء) امارت غرناطہ یعنی بنو نصر کا آخری فرمانروا تھا جو اندلس میں مسلمانوں کی آخری حکومت تھی۔ وہ طائفہ غرناطہ کے حکمران مولائے ابو الحسن کا بیٹا تھا۔

۱۴۸۳ء میں ابو عبداللہ گرفتار ہوکر لوسینا میں قید ہو گیا اور اسے اس شرط پر رہائی نصیب ہوئی کہ امارت غرناطہ عیسائیوں کی باجگذار ہوگی۔ سقوط غرناطہ سے قبل اس نے چند سال اپنے والد مولائے ابو الحسن اور عزیز عبد اللہ الزغال کے خلاف جدوجہد میں گذارے۔

۱۴۸۹ء میں قشتالہ و ارغون کے شاہ فرڈیننڈ اور ملکہ آئزابیلا نے ابو عبد اللہ کو غرناطہ خالی کرنے کا حکم دیا اور انکار پر شہر کا محاصرہ کر دیا۔ ۲ جنوری ۱۴۹۲ء کو ابو عبد اللہ نے ہتھیار ڈال دیے اور اسپین سے مسلم اقتدار کا خاتمہ ہو گیا۔

بعد ازاں وہ آبنائے جبل الطارق عبور کر کے مراکش آگیا جہاں فاس شہر میں اس کا انتقال ہو گیا۔


متعلقہ مضامین[ترمیم]