سپاہ صحابہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

دیوبندی مسلک سے تعلق رکھنے والی جماعت سپاہ صحابہ کا نام پہلے انجمن سپاہ صحابہ تھا۔اس کی بنیاد 1985ء میں پاکستانی پنجاب کے شہر جھنگ میں حق نواز جھنگوی نے رکھی، جنہیں 1990ء میں قتل کر دیا گیا۔حق نواز جھنگوی کے بعد مولانا ایثار الحق قاسمی اس جماعت کے سربراہ بنے، جنہیں 1991ء میں قتل کر دیا گیا۔اس کے بعد ضیاء الرحمن فاروقی نے سپاہ صحابہ کی قیادت سنبھالی لی، جو 18 جنوری 1997ء کو قتل کر دیے گئے۔اس کے بعد اعظم طارق اس جماعت کے سربراہ بنے، جو 2003ء میں اسلام آباد میں قتل کر دیے گئے۔جب جنرل پرویز مشرف نے جنوری 2002ء میں سپاہ صحابہ پاکستان پر بابندی عائد کی اس جماعت کا نام بدل کر ملت اسلامیہ پاکستان رکھ دیا گیا۔ سپاہ صحابہ جماعت کے اب تک 2000 دو ہزار کارکن مارے جاچکے ہیں۔

قتل کیئے جانے والوں کے لواحقین نے مل کرسپاہ صحابہ پاکستان سے ٹوٹ کر ایک نیا گروہ بنایا، جس کا نام لشکر جھنگوی تھا۔ اس پر حکومت پہلے ہی پابندی عائد کر چکی ہے۔ اس کے سربراہ ریاض بسرا کو ایک پولیس مقابلہ میں مار دیا گیا۔

حوالہ جات