شیخ عباس قمی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
شیخ عباس قمی
Sheikh Abbas Qumi.jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1875  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
قم  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 21 جنوری 1941 (65–66 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
نجف  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Iran.svg ایران  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ محدث  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
کارہائے نمایاں مفاتیح الجنان،  منتہی الآمال،  منازل الاخرة  ویکی ڈیٹا پر (P800) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
P islam.svg باب اسلام

شیخ عباس قمی (پیدائش: 1875ء— وفات: 21 جنوری 1941ء) اہل تشیع کے معروف عالم دین اور مشہور محدث تھے۔ اصل نام محمد عباس قمی تھا مگر شہرت اسی نام سے ہو گئی۔

بہت زیادہ عبادت گزار اور نیک شخص تھے۔ اور ان کے علمی کام بھی بہت ہیں۔

ان کی معصومین علیہم السلام سے منقول دعاؤں کی مشہور کتاب مفاتیح الجنان ہے۔ جو ہر شیعہ گھرانے میں ضرور ہوتی ہے۔ [1][2]

کتب[ترمیم]

ان کی بہت زیادہ کتب ہیں۔ تقریبا ان کے کتابوں کی تعداد 51 ہے۔ ان میں سے کچھ مشہور کتابیں یوں ہیں:

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Professor Ali Rahnema (28 May 2015). Shi'i Reformation in Iran: The Life and Theology of Shari’at Sangelaji. Ashgate Publishing, Ltd. صفحہ 126. ISBN 978-1-4724-3416-6.