عفت النساء بیگم

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
عفت النساء بیگم
درانی سلطنت کی ملکہ
شریک حیاتنصراللہ مرزا
احمد شاہ درانی
خاندانتیموری (بلحاظ پیدائش)
افشاری (بلحاظ شادی)
درانی (بلحاظ شادی)
والدداور بخش
مذہباسلام

عفت النساء بیگم ( فارسی: عفت النسا بیگم‎ معنی 'خواتین میں پاکیزہ') ایک مغل شہزادی تھی، وہ مغلیہ سلطنت کے شہنشاہ شاہ جہاں کے نواسے شہزادہ داور بخش کی صاحبزادی تھی۔[1] [2] [3]

خاندان اور نسب[ترمیم]

عفت النساء ایک مغل شہزادی پیدا ہوئی ، اس کے والد کا نام شہزادہ داور بخش تھا۔ داور بخش، شہزادہ عزد بخش، ان کے والد کا نام شہزادہ مراد بخش، ان کے والد کا نام شہنشاہ شاہ جہاں اور شاہ جہاں کی اہلیہ ممتاز محل کے بیٹے تھے۔ اس کی والدہ مہر النساء بیگم تھیں ، جو شہنشاہ اورنگ زیب اور اس کی زوجہ اورنگ آبادی محل کی بیٹی تھی۔

شادیاں[ترمیم]

عفت النساء بیگم نے دو شادیاں کیں، پہلے شوہر کا نام نصراللہ مرزا تھا جو وفات پا گئے اس کے بعد انہوں نے احمد شاہ درانی سے شادی کر لی۔

نصراللہ مرزا[ترمیم]

26 مارچ 1739 کو افشاری خاندان کے شہنشاہ نادر شاہ نے اپنے چھوٹے بیٹے نصراللہ مرزا سے عفت النساء بیگم کی شادی کردی۔ مغل رواج کے مطابق نصراللہ کو ساتویں نسل تک اپنے آباؤ اجداد کا نسب بیان کرنا ضروری تھا لیکن نادر شاہ نے اسے کہا کہ وہ نادر شاہ کا بیٹا ، تلوار کا پوتا ، تلوار کا نواسہ ہے اور اسی طرح اپنا نسب بیان کیا۔.[4] تقریب سے ایک ہفتہ پہلے سے ہی ، بڑے پیمانے پر خوشی منانے کا سلسلہ دن رات جاری رہا۔ دیوانِ خاص کے سامنے دریائے جمنا کے کنارے پر ہر رات ہاتھیوں ، بیلوں ، شیروں اور ہرنوں کے دستوں کے ساتھ محل کا چراغاں کیا جاتا تھا۔[5]

احمد شاہ درانی[ترمیم]

عفت النساء بیگم کے پہلے شوہر نصراللہ کی وفات کے بعد درانی شہنشاہ احمد شاہ درانی نے اس سے خود شادی کرلی۔ اپریل 1757 میں ، شاہی دارالحکومت دہلی کو برخاست کرنے کے بعد ، اس نے متوفی شہنشاہ محمد شاہ کی 16 سالہ بیٹی ، حضرت بیگم سے بھی شادی کرلی۔ پسپائی کے کیمپ میں عالمگیر دوم کی بیٹی عفت النساء اور گوہر النساء بیگم بھی شامل تھیں۔[6]


حوالہ جات[ترمیم]

  1. Amini، Iradj (June 1, 2013). The Koh-i-noor Diamond. Roli Book Private Limited. ISBN 978-9-351-94035-7. 
  2. Askari، Sayed H. (1983). Iqbalnama. Janaki Prakashan. صفحات 379 n. 387. 
  3. Faruqi، Munis D. (August 27, 2012). The Princes of the Mughal Empire, 1504-1719. Cambridge University Press. صفحہ 43. ISBN 978-1-139-53675-2. 
  4. Gupta، Hari Ram (1961). Mrathas and Panipat. Punjab University. صفحہ 325. 
  5. Irvine، William؛ Sarkar، Sir Jadunath (2007). Later Mughals. Sang-e-Meel Publications. صفحہ 686. ISBN 978-9-693-51924-2. 
  6. Sarkar، Sir Jadunath (1950). Fall of the Mughal Empire: 1754-1771. (Panipat) 2 ed., rev. 1950. M. C. Sarkar. صفحہ 92.