قدیم آئرش

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
قدیم آئرش
Old Irish
Goídelc
تلفظ [ˈɡoːi̯ðʲelɡ]
علاقہ آئرلینڈ، آئل آف مین، برطانیہ عظمی کا مغربی ساحل
دور چھٹی صدی-دسویں صدی; دسویں صدی کے لگ بگ وسطی آئرش میں تبدیل
ابتدائی اشکال
لاطینی رسم الخط
زبان رموز
آیزو 639-2 sga
آیزو 639-3 sga
گلوٹولاگ oldi1245[1]
کرہ لسانی 50-AAA-ad
اس مضمون میں بین الاقوامی اصواتی ابجدیہ کی صوتی علامات شامل ہیں۔ موزوں معاونت کے بغیر آپ کو یونیکوڈ حروف کی بجائے سوالیہ نشان، خانے یا دیگر نشانات نظر آسکتے ہیں۔ بین الاقوامی اصواتی ابجدیہ کی علامات پر ایک تعارفی ہدایت کے لیے معاونت:با ابجدیہ ملاحظہ فرمائیں۔

قدیم آئرش (انگریزی: Old Irish) (قدیم آئرش: Goídelc; آئرش: Sean-Ghaeilge; سکاٹش گیلک: Seann Ghàidhlig; مینکس: Shenn Yernish; جسے کبھی کبھار قدیم گیلک (Old Gaelic) بھی کہا جاتا ہے[2][3]) گویڈیلک زبانوں کی قدیم ترین شکل کو دیا جانے والا نام ہے جس کی تحریریں اب بھی وسیع پیمانے پر محفوظ ہیں۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ہرالڈ ہیمر اسٹورم؛ رابرٹ فورکل؛ مارٹن ہاسپلمتھ (ویکی نویس.)۔ "Old Irish (to 900)"۔ گلوٹولاگ 3.0۔ یئنا، جرمنی: میکس پلانک انسٹی ٹیوٹ فار دی سائنس آف ہیومین ہسٹری۔
  2. John Thomas Koch۔ Celtic culture: a historical encyclopedia۔ ABC-CLIO۔ صفحہ 831۔ The Old Irish of the period c. 600–c. 900 AD is as yet virtually devoid of dialect differences, and may be treated as the common ancestor of the Irish, Scottish Gaelic, and Manx of the Middle Ages and modern period; Old Irish is thus sometimes called 'Old Gaelic' to avoid confusion.
  3. Colm Ó Baoill۔ "13: The Scots-Gaelic Interface"۔ The Edinburgh History of the Scots Language۔ Edinburgh University Press۔ صفحہ 551۔ The oldest form of the standard that we have is the language of the period c. AD 600–900, usually called 'Old Irish' – but this use of the word 'Irish' is a misapplication (popular among English-speakers in both Ireland and Scotland)، for that period of the language would be more accurately called 'Old Gaelic'۔

بیرونی روابط[ترمیم]