آرائیں

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

الراعی سے ارائیں کیسے بن گئے؟ عرب سے جیسے عجم ہوئے, عربی زندہ زبان تھی وہ گونگی ہوگئی, عجم میں آ کر اپنی زبان کو ترک کردیا, اس جرم کی پاداش میں اپنا سب کچھ کھو دیا. الراعی میں "ر" حروف شمشی ہے اس سے پہلے ال جب لگتا ہے تو الف بولا جاتا ہے اور "ل" حذف ہو جاتا ہے یعنی الراعی سے اراعی ہوگیا, اور عجم حرف "ع" کی ادائیگی نہیں کرتے اور حرف "ع " تبدیل ہوا حرف "ء" کے ساتھ تو پھر ارائی سے جمع کی صورت میں ارائیں ہوگیا

اآرائیں ایک ذات (Caste) ہے۔ اس ذات کے لوگ پاکستان اوربھارت میں بکثرت پاۓ جاتے ہیں۔

آرائیں ذات کے اجداد فلسطینی عرب تھے، جو 712ء ميں اردن ميں واقع اريحا کے علاقے سے ہجرت کرکے محمد بن قاسم کے ساتھ برصغيرميں داخل ہوئے۔ جب خليفہ سلیمان بن عبدالملک نے محمد بن قاسم کو عرب واپسی کا حکم بھيجا تو وہ خليفہ کی ظالمانہ کارروائيوں کی وجہ سے اپنے آبائی وطن واپس نہ جاسکے۔انہوں نے یہیں قيام کا فيصلہ کرليا اور فوج کی ملازمت چھوڑ کر کھیتی باڑی کواپنا ذریعہ معاش بنالیا۔ وقت کے ساتھ ساتھ ان کی اگلی نسلیں وسطی اور مشرقی پنجاب کے بعد پورے برصغیر میں پھیل گئیں۔


Incomplete-document-purple.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کرکے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔

مزید دیکھئے[ترمیم]

ایک اور روایت کے مطابق یہ لوگ دراصل آریان تہذیب سے تعلق رکھتے ہیں جسکا پتہ ہڑپہ سے چلتا ہے جہاں تین ہزار قبل مسیح میں بھی آرائیں آباد تھے اس کے علاوہ یہ روایت بھی موجود ہے کہ یہ لوگ وسط ایشیاـی ریاستوں سے برصغیر آے تھے