بنگلہ دیش میں کرکٹ میدانوں کی فہرست

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

یہ بنگلہ دیش میں کرکٹ میدانوں کی فہرست (List of cricket grounds in Bangladesh) ہے۔ اس فہرست میں وہ میدان شامل ہیں جہاں فرسٹ کلاس کرکٹ، لسٹ اے کرکٹ اور ٹوئنٹی/20 کے میچ ہوتے ہیں۔ اس کے علاوہ جہاں ٹیسٹ کرکٹ، ایک روزہ بین الاقوامی اور ٹوئنٹی20 بین الاقوامی میچوں کی میزبانی کی گئی ہے وہ بھی اس فہرست میں شامل ہیں۔

ٹیسٹ میدان[ترمیم]

رسمی نام (معروف نام) شہر فرسٹ کلاس ٹیمیں گنجائش پہلا استعمال اینڈز حوالہ
بنگابندو قومی اسٹیڈیم ڈھاکہ 36,000 1 جنوری 1955 • پویلین اینڈ
• پالتان اینڈ
[1]
ایم اے عزیز اسٹیڈیم چٹاگانگ مشرقی پاکستان (1954-1956)
چٹاگانگ (1965)
چٹاگانگ ڈویژن (2001-2002)
30,000 15 نومبر 2001 • پیڈرولو اینڈ
• اصفہانی اینڈ
[2]
ظہور احمد چوہدری اسٹیڈیم چٹاگانگ چٹاگانگ ڈویژن (2005-2008) 22,000 28 فروری 2006 والٹن اینڈ
اصفہانی اینڈ
[3]
شہید چندو اسٹیڈیم بوگرا راجشاہی ڈویژن (2005-2007)
سلہٹ ڈویژن (2005)
ڈھاکہ ڈویژن (2007 & 2010)
باریسال ڈویژن (2007-2008)
کھلنا ڈویژن (2010)
چٹاگانگ ڈویژن (2010)
15,000 8 مارچ 2006 [4]
فتح اللہ عثمانی اسٹیڈیم فتح اللہ 25,000 9 اپریل 2006 • پریس باکس اینڈ
• پویلین اینڈ
[5]
شیر بنگلہ نیشنل کرکٹ اسٹیڈیم ڈھاکہ ڈھاکہ ڈویژن (2006-2008)
چٹاگانگ ڈویژن (2010)
26,000 25 مئی 2007 • اصفہانی اینڈ
• ایکوا پینٹس اینڈ
[6]
شیخ ابو ناصر اسٹیڈیم کھلنا کھلنا ڈویژن (2005-2008)
ڈھاکہ ڈویژن (2010)
باریسال ڈویژن (2010)
چٹاگانگ ڈویژن (2010)
15,000 21 نومبر 2012 [7]
سلہٹ انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم سلہٹ سلہٹ ڈویژن (2000-2008) 22,000 [8]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Bangabandhu National Stadium، CricketArchive.com Retrieved on 29 July 2010.
  2. MA Aziz Stadium، CricketArchive.com Retrieved on 29 July 2010.
  3. چٹاگانگ ڈویژنal Stadium، CricketArchive.com Retrieved on 29 July 2010.
  4. Shaheed Chandu Stadium، CricketArchive.com Retrieved on 29 July 2010.
  5. Narayanganj Osmani Stadium، CricketArchive.com Retrieved on 29 July 2010.
  6. Shere Bangla National Stadium، CricketArchive.com Retrieved on 29 July 2010.
  7. کھلنا ڈویژنal Stadium، CricketArchive.com Retrieved on 29 July 2010.
  8. "ধারণক্ষমতা ২২ হাজারে উন্নীত করা হবে!" (Bengali زبان میں)۔ sylhetexpress.com۔ 16 مارچ 2013۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 10 دسمبر 2014۔

بیرونی روابط[ترمیم]