جامن

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
اضغط هنا للاطلاع على كيفية قراءة التصنيف

جامن (জাম)

Syzygium cumini Bra30.png
جامن

صورت حال   ویکی ڈیٹا پر (P141) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
! colspan = 2 | حیثیت تحفظ
کم تشویشناک انواع[1]
اسمیاتی درجہ نوع  ویکی ڈیٹا پر (P105) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جماعت بندی
مملکت: نباتات
غير مصنف: پھولدار پودےs
غير مصنف: Eudicots
غير مصنف: Rosids
طبقہ: Myrtales
خاندان: Myrtaceae
جنس: Syzygium
نوع: S. cumini
سائنسی نام
Syzygium cumini[2]  ویکی ڈیٹا پر (P225) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ہومر کولر سکلس  ویکی ڈیٹا پر (P225) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
سابق سائنسی نام Myrtus cumini  ویکی ڈیٹا پر (P566) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مرادفات [حوالہ درکار]
*Eugenia cumini (L.) Druce
  • Eugenia jambolana Lam.
  • Syzygium jambolanum DC.‏
  ویکی ڈیٹا پر (P935) کی خاصیت میں تبدیلی کریں


جامن استوائی خطے کا ایک سدا بہار درخت ہے جس کا اصل وطن پاکستان، بھارت، نیپال، بنگلہ دیش اور انڈونیشیا ہے۔ یہ کافی تیزی سے بڑھنے والا درخت ہے جو مناسب حالات میں 30 میٹر کی اونچائی تک پہنچ سکتا ہے۔ درخت اکثر 100 سال سے زیادہ کی عمر پاتا ہے۔ اس کے پتے گھنے اور سایہ دار ہوتے ہیں اور لوگ اسے صرف سایہ اور خوبصورتی کے لیے بھی لگاتے ہیں۔ اس کی لکڑی مضبوط نہیں ھوتی مگر قابل استعمال ہے۔اسے فرنیچر میں استعمال کیا جاتا ہے کھیلوں کا سامان بھی اس سے بنایا جاتا ہے۔جامن کے پھلوں کے رس کے داغ اگر کپڑوں پر لگ جائیں تو مشکل سے جاتے ہیں خوش ذائقہ زود ہضم اور ھردلعزیز پھل ہے۔طبی فوائد بے بہا ہیں۔جن کا ھاضمہ درست نہ ھو انہیں روزانہ نہار منہ کھانے کا مشورہ طبیب دیتے ہیں جامن کی عام طور پر دو اقسام ہیں ایک دیسی جامن اور ایک جنگلی جامن جنگلی جامن سائز میں چھوٹا لیکن ذائقے میں لاجواب ہوتا ہے۔جبکہ جنگلی جامن کے مقابلے میں دیسی جامن کا گودا زیادہ ہوتا ہے۔جو جوس بنانے کے لیے زیادہ کار آمد سمجھا جاتا ہے۔

درخت پر موسم بہار میں چھوٹے چھوٹے خوشبودار پھول آتے ہیں۔ برسات کے موسم تک پھل تیار ہوجاتا ہے۔ پھل کے باہر نرم چھلکا، پھر گودا اور درمیان میں ایک بیج ہوتا ہے۔ پھل کا رنگ جامنی ہوتا ہے، رنگ کا نام اسی پھل کی نسبت سے ہے۔

تفصیل[ترمیم]

جامن پھلوں کا رنگ سبز سے گلابی میں بدلتا ہے اور خون سرخ سے سیاہ ہوتا ہے
جامن کے پتے
جامن کا درخت

تیزی سے بڑھتی ہوئی نوع کے طور پر، یہ 30 میٹر (100 فٹ) تک کی بلندی تک پہنچ سکتی ہے اور 100 سال سے زیادہ زندہ رہ سکتی ہے۔ اس کے گھنے پتے سایہ فراہم کرتے ہیں اور اسے صرف اس کی سجاوٹی قیمت کے لیے اگایا جاتا ہے۔ درخت کی بنیاد پر، چھال کھردری اور گہرے بھوری رنگ کی ہوتی ہے، ہلکی بھوری اور ہموار ہو جاتی ہے۔ بھٹے پر خشک ہونے کے بعد لکڑی پانی سے مزاحم ہوتی ہے۔ اس کی وجہ سے، یہ ریلوے سلیپر میں اور کنوؤں میں موٹریں لگانے کے لیے استعمال ہوتا ہے۔ یہ کبھی کبھی سستے فرنیچر اور گاؤں کے مکانات بنانے کے لیے استعمال ہوتا ہے، حالانکہ یہ بڑھئی کے لیے نسبتاً مشکل ہے۔

جامن کے درخت پر مارچ سے اپریل تک پھول لگنا شروع ہو جاتے ہیں۔ پھول خوشبودار اور چھوٹے ہوتے ہیں، تقریباً 5 ملی میٹر (0.2 انچ) قطر۔ پھل مئی یا جون تک تیار ہوتے ہیں اور بڑے بیر سے ملتے جلتے ہیں۔ جامن پرجاتیوں کے پھل کو "drupaceous" کے طور پر بیان کیا گیا ہے۔ پھل لمبا، بیضوی ہوتا ہے۔ کچا پھل سبز نظر آتا ہے۔ جوں جوں یہ پختہ ہوتا ہے، اس کا رنگ گلابی، پھر چمکتا ہوا کرمسن سرخ اور آخر میں سیاہ رنگ میں بدل جاتا ہے۔ درخت کی ایک قسم سفید رنگ کے پھل پیدا کرتی ہے۔ پھل میں میٹھا، ہلکا کھٹا اور تیز ذائقہ ہوتا ہے اور یہ زبان کو جامنی رنگ دیتا ہے۔

خوراک[ترمیم]

جمبولن پھلوں کا ذائقہ میٹھا یا قدرے تیزابی ہوتا ہے، اسے کچا کھایا جاتا ہے اور اس کی چٹنی یا جام بنایا جا سکتا ہے۔ کمتر پھلوں کا جوس، جیلی، شربت، شربت یا پھلوں کا سلاد بنایا جا سکتا ہے۔

غذائیت[ترمیم]

کچے پھل میں 83% پانی، 16% کاربوہائیڈریٹس، 1% پروٹین اور نہ ہونے کے برابر چکنائی ہوتی ہے۔ 100 گرام حوالہ کی مقدار میں، کچا پھل 60 کیلوریز فراہم کرتا ہے، وٹامن سی کا ایک معتدل مواد، اور قابل قدر مقدار (ٹیبل) میں کوئی دوسرا مائیکرو نیوٹرینٹ نہیں ہوتا۔

جامن
غذائی قدر فی 100 گرام (3.5 oz)
Energy251 کلوJ (60 kcal)
16 g
0.23 g
0.7 g
حیاتینمقدار
Thiamine (B1)
1%
0.006 mg
Riboflavin (B2)
1%
0.012 mg
Niacin (B3)
2%
0.26 mg
Vitamin B6
3%
0.038 mg
حیاتین ج
17%
14 mg
Mineralsمقدار
Calcium
2%
19 mg
Iron
2%
0.2 mg
Magnesium
4%
15 mg
فاسفورس
2%
17 mg
Potassium
2%
79 mg
Sodium
1%
14 mg
دیگر اجزامقدار
Water83 g

Percentages are roughly approximated using US recommendations for adults.
Source: USDA Nutrient Database

تصاویر[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. بین الاقوامی اتحاد برائے تحفظ قدرت ٹیکسن شناخت: 49487196 — اخذ شدہ بتاریخ: 23 دسمبر 2021 — عنوان : The IUCN Red List of Threatened Species 2021.3
  2.   ویکی ڈیٹا پر (P830) کی خاصیت میں تبدیلی کریں"معرف Syzygium cumini دائراۃ المعارف لائف سے ماخوذ". eol.org. اخذ شدہ بتاریخ 4 جولا‎ئی 2022ء.