خالد محسود

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
خالد محسود
معلومات شخصیت
تاریخ پیدائش سنہ 1973  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
تاریخ وفات 8 فروری 2018 (44–45 سال)  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ عسکری قائد  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عسکری خدمات
وفاداری تحریک طالبان پاکستان  ویکی ڈیٹا پر وفاداری (P945) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

خالد محسود (متبادل خالد سید سجنا) (1973- 8 فروری 2018ء) نائب امیر تحریک طالبان پاکستان اور رہنما محسود طالبان گروہ جنوبی وزیرستان، پاکستان۔[1] وہ جنوبی وزیرستان کی تحریک طالبان پاکستان کا سابق سربراہ تھا۔[2] پاکستان کے خفیہ اداروں نے اپنی رپورٹ میں 25 نومبر 2015ء کو لکھا تھا کہ مریکی ڈرون حملے کے نتیجے میں خالد سجنا اور دیگر 12 طالبان ہلاک ہوئے ہیں۔ اعظم طارق، جو ترجمان تحریک طابلان پاکستان تھا اس نے اس خبر کو غلط قرار دیا تھا۔[3] خالد محسود افغانستان کے ساتھ سرحد کے نزدیک شمالی وزیرستان میں 8 فروری 2018ء کو ایک ڈرون حملے میں ہلاک ہوا۔[4]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. M Ilyas Khan (9 جون 2014)۔ "Pakistan Taliban still deadly despite split"۔ بی بی سی نیوز۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 جون 2014۔
  2. Mushtaq Yusufzai (3 نومبر 2013)۔ "Hakimullah buried secretly"۔ دی نیوز۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 نومبر 2013۔
  3. "Palistan Taliban commander allegedly killed by drones"۔ Al-Jazeera۔ نومبر 26, 2015۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ جون 20, 2016۔
  4. "Pakistani Taliban deputy Khalid Mehsud 'killed in drone attack'"۔ BBC۔ 8 فروری 2018۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔