دل اپنا اور پریت پرائی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
دل اپنا اور پریت پرائی
Dil Apna Aur Preet Parai
Dil Apna Aur Preet Parai.jpg
Theatrical release poster
ہندیदिल अपना और प्रीत पराई
ہدایت کارکشور ساہو
پروڈیوسرکمال امروہی
تحریرKishore Sahu
Madhusudan (supervising writer)
ستارےراج کمار
مینا کماری
نادرہ (اداکارہ)
موسیقیشنکر جے کشن
سنیماگرافیJosef Wirsching
ایڈیٹرکانتی لال بی شکلا
پروڈکشن
کمپنی
محل پکچرز
تاریخ اجراء
  • 4 مارچ 1960ء (1960ء-03-04)
[1]
دورانیہ
155 منٹ
ملکبھارت
زبانہندی
باکس آفس90 (امریکی $1.30)

دل اپنا اور پریت پرائی 1960 میں بنائی گئی ہندی زبان کی ایک رومانٹک ڈرامہ فلم ہے ، جسے ایس اے باگر نے بنایا تھا۔ اس فلم کے ہدایتکار اور مصنف کشور ساہو تھے۔ فلم میں راج کمار ، مینا کماری اور نادرا نے مرکزی کردار ادا کئے تھے ۔ اس فلم میں ایک ایسے سرجن کی کہانی بیان کی گئی ہے جو ایک خاندانی دوست کی بیٹی سے شادی کا پابند ہے ، جبکہ اسے ایک ساتھی نرس سے پیارہو جاتا ہے ، جس کا کردار مینا کماری نے ادا کیا تھا۔ یہ مرکزی کردار اداکارہ مینا کماری کے کیریئر کی نمایاں اداکاری میں سے ایک ہے۔ [2]

فلم کی موسیقی شنکر جےکشن نے ترتیب دی تھی ، اس فلم کا مقبول ترین نغمہ تھا " عجیب داستاں ہے یہ" ، جسے لتا منگیشکر نے گایا تھا۔ [3] 1961 کے فلم فیئر ایوارڈ میں اس نے نوشاد کے مشہور میوزیکل مہاکاوی مغل اعظم کو بہترین میوزک ڈائریکٹر کے زمرے میں شکست دے کر عجیب صورتحال پیدا کردی۔

پلاٹ[ترمیم]

سشیل ورما ( راج کمار ) شملہ اسپتال میں ایک سرجن ہیں۔ وہ اپنی عمر رسیدہ والدہ اور چھوٹی بہن منی (کماری ناز) کے ساتھ اسپتال کے احاطے میں ڈاکٹر کے لئے بنے گھر میں رہائش پذیر ہیں۔ سشیل کے والد کی وفات کے بعد ، اس کے والد کے قریبی دوست نے سشیل کے میڈیکل اسکول کی فیس ادا کردی ، اس طرح ایسی صورت حال نے جنم لیا جس کی وجہ سے سشیل کی والدہ کو لگتا ہے کہ وہ رقم ان پر قرض ہے اور اسے اداکرنے کی ضرورت ہے۔ کرُونا ( مینا کماری ) ایک نرس ہیں جن کی تقرری شملہ اسپتال میں ہوتی ہے اور آنے کے بعد ان کا سامنا ایک ہنگامی سرجری کے دوران سشیل سے ہوتاہے۔ دونوں ہی ایک دوسرے پر ددا ہوجاتے ہیں ، لیکن اپنے جذبات کو قابو میں رکھتے ہیں۔

اتفاق سے ،ایک دن جب نرسیں ساحل پر تفریح کے لئے گئیں ، تو کرونا کی ملاقات مُنی سے ہوئی ، جو کھیلنے کے دوران زخمی ہو جاتی ہے۔ وہ مُنی کو اس کے گھر لے جاتی ہے ، لیکن اسے یہ علم نہیں ہوتا کہ وہ ڈاکٹر ورما کی بہن ہیں ، اور جس گھر میں وہ جا رہے ہیں وہ اسی کا ہے۔ وہ منی کے زخموں کپر پٹی باندھتی ہے، دیکھتی ہے کہ گھر میں کتنے کام ادھورے پڑے ہیں ، اور اس کی وجہ یہ ہے کہ اس کی والدہ شدید بیمار ہیں جس کی وجہ سے وہ گھر کے کام کاج کو نہین دیکھ سکتیں۔ واس نے فورا ان تمام کاموں کو سرانجام دیا اور گھریلو خاتون کے فرائض پوری کئے۔ کھانا پکانا ، صفائی ستھرائی اور سب کا خیال رکھنا۔ سشیل جب گھر آتا ہے تو یہ سب دیکھ کر اسے کرُونا سے اور بھی زیادہ پیار ہوجاتا ہے۔

کچھ عرصہ بعداس کی والدہ پورے خاندان کے ساتھ کشمیر کی سیر کرنے جاتی ہیں ، اور سشیل کو اس کی میڈیکل اسکول کی فیسوں کی ادائیگی کرنے والے شخص کی بیٹی کسُم ( نادرا ) سے شادی کرنے پر رضامند کر لیتی ہے۔

وہ واپس شملہ آ گئے ، جب کرُونا کو اس سارے واقعے کی خبر ہوتی ہے تو وہ ٹوٹ جاتی ہے۔ اگرچہ وہ تھوڑی دیر کے لئے اس کیفیت کو چھپانے میں کامیاب ہوجاتی ہے ، گزرتے وقت کے ساتھ ساتھ کسُم کو سشیل کا کرُونا کا اس قدر خیال رکھنا ایک آنکھ نہیں بھاتا اور وہ اس سے جلنے لگتی ہے۔ وہ اپنی ساس اور نند سے بھی بدسلوکی کرتی ہے ، یہاں تک کہ سشیل اسے گھر سے نکال دیتا ہے۔ وہ واپس کشمیر چلی گئ۔

ڈاکٹر ورما کی والدہ کو تب اپنی غلطی کا احساس ہوا ، کہ انہیں سشیل کی شادی کرونا سے کرنی چاہئے تھی۔

اسکینڈل سے بچنے کے لئے ، کرونا دوسرے اسپتال میں منتقل ہوگئی۔ لیکن کسُم اس سے بدلہ لینا چاہتی تھی۔ ایک دن وہ ان دونوں کا موٹر کار میں پیچھا کری ہے اور تیز رفتاری کے باعث کار پہاڑی سے گر جاتی ہے جس کے نتیجے میں کسُم ہلاک ہوجاتی ہے۔ فلم کے اختتام پر سشیل اور کرُونا کا ملاپ ہو جاتا ہے۔

ستارے[ترمیم]

  • راج کمار بحیثیت ڈاکٹر سشیل ورما
  • مینا کماری بطور کرُونا
  • نادرہ بطورکسم
  • روبی ایرس ہیڈ نرس کے طور پر
  • ٹن ٹن بحیثیت حسینہ
  • اوم پرکاش بطور گردھاری
  • شمی بحیثیت شیلہ
  • کماری ناز بطور مُنی
  • مسز طور مائما دیوی کے. ورما (بحیثیت پروٹیما دیوی)
  • نرس روزی طور ادوانا
  • ہیلن بطور کیبری ڈانسر

ساؤنڈ ٹریک[ترمیم]

تمام موسیقی کے کمپوزر شنکر جے کشن.

نمبر شمارعنوانبولگلوکارطوالت
1."عجیب داستان ہے یہ"شیلندرلتا منگیشکر 
2."آنند میرا مستانہ"شیلندرلتا منگیشکر 
3."دل اپنا اور پریت پرائی"شیلندرلتا منگیشکر 
4."اتنی بڑی محفل"حسرت جے پوریآشا بھوسلے 
5."جین کہاں گئی"شیلندرمحمد رفیع 
6."میرا دل اب تیرا ہو سجنا"شیلندرلتا منگیشکر 
7."شیشہِ دل اتنا نہ اچھالو"حسرت جے پوریلتا منگیشکر 

ایوارڈ[ترمیم]

مزید دیکھیں[ترمیم]

  • ارمان (2003 فلم)

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Dil Apna Aur Preet Parai". Times of India. اخذ شدہ بتاریخ 02 جولا‎ئی 2018. 
  2. Mahmood، Hameeduddin (1974). The kaleidoscope of Indian cinema. Affiliated East-West Press. صفحہ 213. 
  3. Mahajan، Mradula (6 September 2018). "The Ultimate Lata Mangeshkar Hit Songs List". Onrecord. JioSaavn. اخذ شدہ بتاریخ 05 مارچ 2019. 

بیرونی روابط[ترمیم]

Dil Apna Aur Preet Parai آئی ایم ڈی بی پر  ویکی ڈیٹا پر (0053767) کی خاصیت میں تبدیلی کریں