سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
Army of the Guardians of the Islamic Revolution
سپاه پاسداران انقلاب اسلامی
Seal of the Army of the Guardians of the Islamic Revolution.svg
فعال 1979–present
ملک Flag of ایران ایران
تابعدار Supreme Leader of Iran
شاخ
حجم ≈120,000–125,000
فوجی چھاؤنی /ایچ کیو تہران
نصب العین عربی: وَأَعِدُّوا لَهُمْ مَا اسْتَطَعْتُمْ مِنْ قُوَّةٍ
"Prepare against them what force you can." [قرآن 8:60]
معرکے 1979 Kurdish rebellion
Lebanese Civil War[1]
ایران عراق جنگ
War on Terrorism (Battle for Herat)
بلوچستان تنازع
Iran–PJAK conflict
شامی خانہ جنگی
2014 Northern Iraq offensive
War on ISIL
کمان دار
Chief Commander Maj.Gen. Mohammad Ali Jafari
Quds Force Maj. Gen. Qasem Soleimani
Chief of the Joint Staff Bri.Gen. Mohammad Hejazi
IRGC Ground Forces Bri.Gen. Mohammad Pakpour
IRGC Aerospace Force Bri.Gen. Amir Ali Hajizadeh
IRGC Navy Rear.Admiral. Ali Fadavi
Mobilization forces Bri.Gen. Mohammad Reza Naqdi

سپاہِ پاسدارانِ انقلابِ اسلامی (فارسی: سپاه پاسداران انقلاب اسلامی) جسے مختصراً پاسدارانِ انقلاب یا پاسداران کہا جاتا ہے، ایران کی افواج کا ایک حصہ ہے جو نظریاتی بنیادوں پر وجود میں آئی تھی اور یہ کسی حد تک عام افواج سے الگ اپنا آزاد وجود قائم رکھتی ہے۔ اسے انگریزی خبروں میں Army of the Guardians of the Islamic Revolution کہا جاتا ہے۔ موجودہ ایرانی صدر احمدی نژاد بھی 1980ء تا 1988ء کی ایران عراق جنگ کے دوران اس میں شامل رہے ہیں۔ پاسدارانِ انقلاب کے موجودہ سربراہ محمد علی جعفری ہیں۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Cite error: حوالہ بنام ostovar کے لیے کوئی متن فراہم نہیں کیا گیا ().