مسعود اظہر

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
مسعود اظہر
معلومات شخصیت
پیدائش 10 جولا‎ئی 1968 (52 سال)  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بہاولپور  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رہائش پاکستان  ویکی ڈیٹا پر رہائش (P551) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Pakistan.svg پاکستان  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رکن جیش محمد  ویکی ڈیٹا پر رکن (P463) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بہن/بھائی
عملی زندگی
مادر علمی جامعہ العلوم الاسلامیہ بنوری ٹاؤن  ویکی ڈیٹا پر تعلیم از (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ دہشت گرد، خطیب  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان اردو  ویکی ڈیٹا پر زبانیں (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عسکری خدمات
وفاداری حرکتہ المجاہدین  ویکی ڈیٹا پر وفاداری (P945) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
لڑائیاں اور جنگیں افغانستان میں سوویت جنگ، جموں و کشمیر میں بدامنی  ویکی ڈیٹا پر لڑائی (P607) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

مسعود اظہر اقوام متحدہ کی دہشت گرد تسلیم شدہ تنظیم[1] جیش محمد کے بانی اور قائد ہیں، جو زیادہ تر پاکستان کے زیر انتظام کشمیر میں سرگرم ہے۔[2] 2016ء میں پٹھان کوٹ حملے کے بعد پاکستانی عہدیداروں نے انہیں گرفتار کر لیا تھا[3] لیکن بھارتی دعویٰ ہے کہ گرفتاری کا رنگ دے کر انہیں محفوظ کیا گیا۔[4] ہندوستان ٹائمز کے مطابق اپریل 2016ء میں وہ بالکل آزاد گھمتے دیکھے گئے۔[5] بھارت نے مسعود اظہر کو انتہائی دہشت گرد ترین کی فہرست میں شامل کیا ہوا ہے۔[6][7]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Gunaratna، Rohan؛ Kam، Stefanie، Handbook of Terrorism in the Asia–Pacific، World Scientific، ISBN 978-1-78326-997-6 نادرست |=مردہ ربط (معاونت)
  2. "The astonishing rise of Jaish-e-Mohammed: It's bad news for Kashmir, India and Pakistan"۔ FirstPost۔ مورخہ 2016-01-16 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 17 January 2016۔ نامعلوم پیرامیٹر |dead-url= ignored (معاونت); نادرست |=مردہ ربط (معاونت)
  3. "Pakistan Arrests JeM Militants After Pathankot Airbase Attack"۔ جیو نیوز۔ مورخہ 2016-01-16 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 13 January 2016۔ نامعلوم پیرامیٹر |dead-url= ignored (معاونت); نادرست |=مردہ ربط (معاونت)
  4. Jaish's Masood Azhar under 'protective custody', confirms Punjab Law Minister Archived 2016-10-03 at the Wayback Machine, Dawn, 15 January 2016.
  5. JeM's Azhar lives freely in Pakistan, govt never detained him: Report Archived 2016-10-05 at the Wayback Machine, Hindustan Times, 26 April 2016.
  6. India's most wanted۔ Frontline۔ ISBN 0066210631۔ مورخہ 2012-09-23 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ نامعلوم پیرامیٹر |dead-url= ignored (معاونت); نادرست |=مردہ ربط (معاونت)

بیرونی روابط[ترمیم]