چیلسی ہینڈلر

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
چیلسی ہینڈلر
Sec. John King and Chelsea Handler (cropped).jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش 25 فروری 1975 (45 سال)[1][2]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
لیونگسٹن، نیو جرسی  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of the United States (1795-1818).svg ریاستہائے متحدہ امریکا  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
آنکھوں کا رنگ نیلا  ویکی ڈیٹا پر (P1340) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جماعت ڈیموکریٹک پارٹی  ویکی ڈیٹا پر (P102) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ اداکارہ اور ادکارہ،  مزاحیہ اداکار،  ٹیلی ویژن اداکارہ،  سوانح نگار،  فلم اداکارہ،  مصنفہ،  سکوبا غوطہ غور،  آپ بیتی نگار  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ویب سائٹ
ویب سائٹ باضابطہ ویب سائٹ  ویکی ڈیٹا پر (P856) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحہ  ویکی ڈیٹا پر (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

چیلسی ہینڈلر (انگریزی: Chelsea Handler) ( پیدائش: 25 فروری 1975ء) امریکی یہودی نژاد اداکارہ، کامیڈین، ٹیلی وژن میزبان، مصنفہ، پروڈیوسر اور فعالیت پسند ہیں۔ انہوں نے 2007ء سے 2014ء تک ای نیٹ ورک (E! network) پر رات کے وقت کے ایک ٹاک شو Chelsea Lately کی میزبانی کے فرائض انجام دیئے۔ جنوری 2016ء میں نیٹ فلکس پر ایک ڈاکومنٹری Chelsea Does جاری ہوئی۔[3] 2016ء سے 2017ء کے درمیانی عرصہ میں انہوں نے Chelsea کے نام سے ایک ٹاک شو کی میزبانی کی۔ 2012ء میں ٹائم رسالے نے چیلسی کو 100 با اثر شخصیات کی فہرست ٹائم 100 میں شامل کیا۔[4] 2010ء میں فوربس (جریدہ) نے انہیں 100 مشاہیر کی فہرست میں 92 نمبر پر شامل کیا۔[5]

حالات زندگی[ترمیم]

چیلسی ہینڈلر 25 فروری 1975ء[6] میں لیونگسٹن، نیو جرسی، ریاستہائے متحدہ امریکا میں پیدا ہوئیں۔ وہ کار ڈیلر اور ہوم میکر ریٹا کے 6 بچوں میں سب سے بڑی ہیں۔ ان کے والد اشکنازی یہود اور والدہ جرمن نژاد تھیں۔ انہوں نے لیونگسٹن اسکول سے تعلیم حاصل کی۔ ان کے Cosmopolitan (magazine) اور Now (1996–2019 magazine) میں کالم شائع ہوتے رہے ہیں۔مئی 2009ء میں انہوں نے سان فرانسسکو میں ہونے والے 20 ویں سالانہ گلیڈ میڈیا ایوارڈ (GLAAD Media Award) کی میزبانی کے فرائض انجام دیئے۔ مارچ 2012ء میں انہوں نے لاس اینجلس میں ہونے والے انسانی حقوق مہم گالا کی میزبانی کی۔ ان کی اب 6 کتابیں شائع ہو چکی ہیں، جن میں My Horizontal Life: A Collection of One-Night Stands، Are You There, Vodka? It's Me, Chelsea، Chelsea Chelsea Bang Bang، Lies That Chelsea Handler Told Me، Uganda Be Kidding Me اور Life Will Be the Death of Me: . . . and you too! شامل ہیں۔ ان کی کتابوں کے باعث چیلسی نیو یارک ٹائمز کے بیسٹ سیلر مصنفین کی صف میں بھی شامل رہی ہیں۔ چیلسی کی کتابیں اس قدر کامیاب رہتی ہیں کہ وہ پبلشر کا کریڈٹ بھی شیئر کرتی ہیں۔[7]

تصانیف[ترمیم]

  • Handler، Chelsea (2005). My Horizontal Life: A Collection of One-Night Stands. New York: Bloomsbury USA. ISBN 978-1-58234-618-2. 
  • Handler، Chelsea (2008). Are You There, Vodka? It's Me, Chelsea. New York: Simon Spotlight Entertainment. ISBN 978-1-4169-5412-5. 
  • Handler، Chelsea (2010). Chelsea Chelsea Bang Bang. New York: Grand Central Publishing. ISBN 978-0-446-55244-8. 
  • Handler، Chelsea (2011). Lies That Chelsea Handler Told Me. New York: Grand Central Publishing. ISBN 978-0-446-58471-5. 
  • Handler، Chelsea (2014). Uganda Be Kidding Me. New York: Grand Central Publishing. ISBN 978-1-4555-9973-8. 
  • Handler, Chelsea (2019). Life Will Be the Death of Me: . . . and you too!. New York: Spiegel & Grau. آئی ایس بی این 9780525511779.

بیرونی روابط[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/Chelsea-Handler — بنام: Chelsea Handler — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  2. ڈسکوجس آرٹسٹ آئی ڈی: https://www.discogs.com/artist/2577649 — بنام: Chelsea Handler — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  3. Andrew Wallenstein (February 18, 2015). "Chelsea Handler Rips E!, Says Upcoming Netflix Show Like '60 Minutes' But 'Faster, Cooler'". Variety. 
  4. http://www.time.com/time/specials/packages/article/0,28804,2111975_2111976_2112087,00.html The 100 Most Influential People in the World: Chelsea Handler
  5. https://www.forbes.com/2010/06/22/lady-gaga-oprah-winfrey-business-entertainment-celeb-100-10_land.html Forbes Celebrity 100 List
  6. "Chelsea Handler: Biography". TV Guide. اخذ شدہ بتاریخ September 13, 2010. 
  7. لیاقت علی جتوئی، بالی وڈ کی با صلاحیت اداکارئیں لکھتی بھی کمال ہیں (مضمون(، مشمولہ: روزنامہ جنگ کراچی، 20 فروری 2020ء، صفحہ 8