تھیوڈور ہرتزل

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
تھیوڈور ہرتزل
(جرمن میں: Theodor Herzl ویکی ڈیٹا پر مقامی زبان میں نام (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Theodor Herzl.jpg 

معلومات شخصیت
پیدائشی نام (عبرانی میں: בִּנְיָמִין זְאֵב הֶרְצֵל ویکی ڈیٹا پر پیدائشی نام (P1477) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیدائش 2 مئی 1860[2][3][4][5][6][7]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پست  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 3 جولا‎ئی 1904 (44 سال)[2][7][3][4][5][6]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجۂ وفات نمونیا  ویکی ڈیٹا پر وجۂ وفات (P509) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
طرز وفات طبعی موت  ویکی ڈیٹا پر طرزِ موت (P1196) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of the Habsburg Monarchy.svg آسٹریائی سلطنت
Flag of Austria-Hungary (1869-1918).svg آسٹریا-مجارستان  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
مادر علمی جامعہ ویانا  ویکی ڈیٹا پر تعلیم از (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ صحافی، وکیل، ڈراما نگار  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان جرمن[8]  ویکی ڈیٹا پر زبانیں (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
دستخط
Theodore Herzl signature.svg 

تھیوڈور ہرتزل (عبرانی: תאודור הֶרְצֵל تے'odor Hertsel، ہنگیرین: Herzl Tivadar; 2 مئی 1860 – 3 جولائی 1904; عبرانی میں ان برٹ milah Binyamin Ze ' ev (عبرانی: בִּנְיָמִין זְאֵב[9] کے نام سے بھی جانا جاتا ہے، عبرانی میں חוֹזֵה הַמְדִינָה، Chozeh HaMedinah، ریاست کی "بصیرت" دیکھنے والا کے طور پر بھی جانا جاتاہے۔ ) آسٹریائی مجرستانی صحافی، ڈراما نگار، سیاسی کارکن اور مصنف تھا جو بابائے   جدید سیاسی صیہونیت بھی کہلاتا ہے۔ ھرتزل نے ایک صیہونی تنظیم قائم کی اوریہودی ریاست کے قیام کے لیے  فلسطین  کی جانب یہود کی ہجرت کی بھر پور حمایت اور تائید کرتا رہا۔ اگرچہ وہ اس ریاست کے قیام سے پہلے مر گیا ، وہ بابائے ریاست  اسرائیل کہ طور پہ جانا جاتا ہے۔ ھرتزل کا  منشور استقلال اسرائیل میں خاص طور پر ذکر کیا گیا اور باضابطہ طور پر "یہودی ریاست کا  روحانی بانی" قرار دیا گیا، [10]

Chozeh HaMedinah یعنی بصیرت  اور خواب دینے والا جسنے سیاسی صیہونیت کے لیے  ایک ٹھوس ، قابل عمل پلیٹ فارم اور ڈھانچہ دیا ، وہ پہلاصیہونی نظریہ ساز  یا  کارکن  نہیں تھا ;  اس سے پہلے بھی دانشوروں میں بہت سے مذہبی ربّیوں  یہودا بباس ، ذوی ہرسچ کلیسچر اور یودہ الکالی  ، ابتدائی -صیہونی خیالات کی حمایت اور ترقی دیتے رہے-اسرائیلی تاریخ میں ھرتزل اور پاکستانی تاریخ  میں اقبال کے رتبے ، زمانہ اور کردار میں حیران کن مماثلت ہے-

[11][12]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "ترجمہ سکھلائی"۔
  2. ^ ا ب اجازت نامہ: CC0
  3. ^ ا ب دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/Theodor-Herzl — بنام: Theodor Herzl — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  4. ^ ا ب ایس این اے سی آرک آئی ڈی: https://snaccooperative.org/ark:/99166/w61g0tx0 — بنام: Theodor Herzl — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  5. ^ ا ب فائنڈ اے گریو میموریل شناخت کنندہ: https://www.findagrave.com/cgi-bin/fg.cgi?page=gr&GRid=22315 — بنام: Theodor Herzl — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  6. ^ ا ب ISFDB author ID: http://www.isfdb.org/cgi-bin/ea.cgi?208813 — بنام: Theodor Herzl — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  7. ^ ا ب http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb119074370 — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  8. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb119074370 — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  9. Esor Ben-Sorek (18 اکتوبر 2015)۔ "The Tragic Herzl Family History"۔ Times of Israel۔ At his brit mila he was given the Hebrew name Binyamin Zeev 
  10. Israel Ministry of Foreign Affairs, Declaration of Establishment of State of Israel [1]
  11. Lehman-Wilzig, Sam N. "Proto-Zionism and its Proto-Herzl: The Philosophy and Efforts of Rabbi Zvi Hirsch Kalischer." Tradition: A Journal of Orthodox Jewish Thought 16.1 (1976): 56-76.
  12. Penkower, Monty N. "Religious Forerunners of Zionism." Judaism 33.3 (1984): 289.