مندرجات کا رخ کریں

سمن کماری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
سمن کماری
سمن ڪماري
معلومات شخصیت
مقام پیدائش ضلع قمبر-شہدادکوٹ، سندھ، پاکستان
عملی زندگی
مادر علمی شہید ذوالفقار علی بھٹو انسٹی ٹیوٹ آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی
پیشہ منصف   ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

سمن کماری ایک پاکستانی خاتون جج ہیں۔ وہ پاکستان میں جج بننے والی پہلی ہندو خاتون ہیں۔ وہ اس وقت اپنے آبائی ضلع قمبر شہدادکوٹ [1][2][3] میں خدمات انجام دے رہی ہیں۔ اس کا پورا نام سمن پاون بدانی ہے۔ وہ سول ججز کی میرٹ لسٹ میں 54ویں نمبر پر آئی ہیں۔[4] پاکستان میں مرد ججوں کے مقابلے میں خواتین جج کی تعداد ناکافی ہے، اقلیتی فرقوں سے وابستہ مرد و خواتین بھی تاریخ پاکستان میں اس عہدے پہ بہت کم فائز ہوئے ہیں۔ حال ہی میں پہلی بار دو ہندو خواتین پاکستانی ججوں میں شامل ہوئی ہیں۔[5]

کیریئر[ترمیم]

سمن کماری نے حیدرآباد سے اپنا ایل ایل بی کا امتحان پاس کیا[6] اور شہید ذوالفقار علی بھٹو انسٹی ٹیوٹ آف سائنس اینڈ ٹکنالوجی (زبیسٹ) یونیورسٹی کراچی سے قانون میں ماسٹرز کی ڈگری حاصل کی۔ پھر اس نے وکیل رشید اے رضوی کی فرم کے لیے کام کیا۔ 2019 میں، اس نے سول اینڈ جوڈیشیل مجسٹریٹ افسران کی تقرری کے لیے امتحان پاس کیا[7] اور اسے سول جج کی حیثیت سے مقرر کیا گیا۔ [2]

ذاتی زندگی[ترمیم]

سمن کماری ضلع قمبر شہدادکوٹ میں رہتی ہے۔ ان کے والد ڈاکٹر پون کمار بودانی آنکھوں کے ماہر ڈاکٹر ہیں۔ اس کی بڑی بہن سافٹ ویئر انجینئر ہے اور دوسری بہن چارٹرڈ اکاؤنٹنٹ ہے۔ سمن کماری گلوکاروں لتا منگیشکر اور عاطف اسلم کی مداح ہیں۔ [2]

بھی دیکھو[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Suman Kumari becomes Pakistan's first Hindu woman judge"۔ دی اکنامک ٹائمز۔ 29 جنوری 2019۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 جنوری 2019 
  2. ^ ا ب پ "Hindu woman appointed civil judge"۔ Mohammad Hussain Khan۔ Dawn۔ 29 جنوری 2019۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 جنوری 2019 
  3. "Suman Kumari becomes Pakistan's first Hindu woman judge"۔ The Indian Express۔ 29 جنوری 2019۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 جنوری 2019 
  4. https://www.nawaiwaqt.com.pk/28-Jan-2019/976492
  5. https://www.independenturdu.com/node/1706/خواتین/دفتر/پاکستان-میں-جج-کے-عہدے-پر-فائزہونے-والی-دو-ہندو-خواتین
  6. https://www.dawnnews.tv/news/1096406/
  7. "آرکائیو کاپی"۔ 16 نومبر 2020 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 15 نومبر 2020