متصرفیہ قدس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
متصرفیہ قدس شریف
Kudüs-i Şerif Mutasarrıflığı
Mutasarrifate of Jerusalem
متصرفیہ سلطنت عثمانیہ

1872–1917

Flag of جنوبی شام

پرچم

Location of جنوبی شام
1896ء کا شام کا نقشہ بشمول متصرفیہ قدس
دار الحکومت یروشلم
تاریخ
 -  قیام 1872
 -  برطانوی قبضہ 1917
رقبہ
 -  1862[2] 12,486 کلومیٹر2 (4,821 مربع میٹر)
آبادی
 -  1897[1] 298,653 
آج کا حصہ Flag of Egypt.svg مصر
Flag of Israel.svg اسرائیل
Flag of Jordan.svg اردن
Flag of Palestine.svg فلسطین

متصرفیہ قدس یا متصرفیہ قدس شریف یا متصرفیہ یروشلم (عثمانی ترکی زبان: Kudüs-i Şerif Mutasarrıflığı; عربی: متصرفية القدس الشريف; انگریزی: Mutasarrifate of Jerusalem) جسے سنجاق قدس (ترکی: Kudüs Sancağı) بھی کہا جاتا ہے، خصوصی حیثیت کا ایک عثمانی انتظامی ضلع (متصرفیہ) تھا جسے 1872ء میں قائم کیا گیا۔[3][4][5] ضلع یروشلم اور اس کے علاوہ بیت لحم، الخلیل، یافا، غزہ اور بئر السبع کا احاطہ کیے ہوئے تھا۔[6]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Servet Mutlu۔ "Late Ottoman population and its ethnic distribution" (پی‌ڈی‌ایف)۔ صفحات 29–31۔ Corrected population for Mortality Level=8.
  2. The Popular encyclopedia: or, conversations lexicon۔ Blackie۔ صفحہ 698۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2013-06-01۔
  3. Johann Büssow (2011-08-11)۔ Hamidian Palestine: Politics and Society in the District of Jerusalem 1872-1908۔ BRILL۔ صفحہ 5۔ آئی ایس بی این 978-90-04-20569-7۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2013-05-17۔
  4. Abu-Manneh 1999، صفحہ۔ 36.
  5. James P. Jankowski؛ Israel Gershoni (جنوری 1997)۔ Rethinking Nationalism in the Arab Middle East۔ Columbia University Press۔ صفحہ 174۔ آئی ایس بی این 978-0-231-10695-5۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2013-06-29۔
  6. Adel Beshara (2012-04-23)۔ "The Name of Syria in Ancient and Modern Usage"۔ The Origins of Syrian Nationhood: Histories, Pioneers and Identity۔ CRC Press۔ صفحات 56–59۔ آئی ایس بی این 978-1-136-72450-3۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2013-06-29۔