وراثی رموز

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
خلیات میں لحمیات کی تیاری کے مراحل کا خاکہ۔ مزید تفصیل اور اعداد کی وضاحت کے ليے مضمون دیکھیے۔

وراثی رموز (genetic codes) دراصل وہ اصول و ضوابط ہوتے ہیں جن کی مدد سے وراثی مادے میں زندگی بنانے کے ليے پوشیدہ معلومات (یعنی ڈی این اے اور آر این اے کی ترتیب) کی encoding کرکے انکا لحمیاتی سالمات (یعنی امائنوایسڈ کی ترتیب) کی صورت میں تـرجـمہ کیا جاتا ہے۔

اصطلاح term
رمز (جمع : رموز / روامیز)
رامِزہ (جمع : روامز)
وراثی رمز

Code
Codon
Genetic code

یہ وراثی رموز یا genetic codes ، ڈی این اے کے تین تین بنیادی سالمات کے گروہ کی صورت میں موجود ہوتے ہیں۔ اسطرح تین سالمات سے بننے والے ہر ایک گروہ یا جوڑے کو رامِزہ کہا جاتا ہے اور اسکی جمع روامز ہوتی ہے، اسکو انگریزی میں codon کہتے ہیں۔ سادہ الفاظ میں رامزہ کو یوں بیان کرسکتے ہیں کہ روامز (codons) دارصل زندگی بنانے والے رموز (codes) ہوتے ہیں ، بالکل اسی طرح جس طرح کمپیوٹر کے اسکرین پر نظر آنے والے کسی ویب پیج کے پیچھے HTML کے کوڈز ہوتے ہیں۔ خالق کائنات نے صرف 4 عدد حروف استعمال کرتے ہوئے اس کائنات میں نظر آنے والی زندگی کی اتنی لاتعداد اقسام کی coding کردی ہے کہ انسانی عقل جب اسے جاننے کی کوشش کرتی ہے تو دنگ رہ جاتی ہے۔

اور جیسے HTML کو سمجھنے کے ليے تین عدد تصورات بنام مارک آپ لینگویج ، ہائپر ٹیکسٹ اور ویب کے تصور کو سمجھنا لازمی ہے بالکل ایسے ہی رامِزہ کو سمجھنے کے ليے تین عدد سالمات بنام DNA ، RNA اور لحمیہ کی ساخت اور انکا ایک جاندار کے جسم میں بنیادی کام سمجھنا مفید ہی نہیں لازمی ہے، اسی وجہ سے رامِزہ پر اصل مضمون کی ابتداء کرنے سے قبل ان تینوں سالمات کا ایک مختصر پس منظر دیا جارہا ہے۔

پس منظر[ترمیم]

سالماتی حیاتیات کو سمجھنے کے ليے درج ذیل میں ایک پس منظر، درجہ بہ درجہ ترتیب وار دیا جارہا ہے، ہر آنے والا بیان اپنے سے اوپر موجود بیان سے منسلک ہے۔

  • تمام جاندار خلیات سے ، خلیات پھر سالمات سے اور سالمات ، جوہروں سے بنتے ہیں۔
  • جانداروں کے جسم میں اہم تیرین سالمات میں ؛ لحمیہ ، شحم ، نشاستہ ، وٹامن اور پانی شامل ہیں اور یہ پانچوں ، مکثورہ (polymer) سالمات ہیں۔ اسکے علاوہ مختلف معدنیات بھی ہوتے ہیں۔
  • مندرجہ بالا 5 عدد سالمات میں سے لحمیہ (جمع لحمیات) وہ سالمات ہیں جو نہ صرف ساخت بنانے میں حصہ لیتے ہیں بلکہ جسم میں ہونے والے مختلف کیمیائی تعملات میں بھی حصہ لیتے ہیں۔
  • اوپر کے بیان کے بعد یہ واضع ہے کہ لحمیات کی ساخت میں کوئی گڑبڑ بہت نقصان دہ ہوتی ہے۔ اور اسی ليے لحمیات کی تیاری کا فریضہ DNA میں موجود Codes کی مدد سے انتہائی باریک بینی سے انجام دیا جاتا ہے۔

لحمیات کی تیاری[ترمیم]

اصل مضمون: وراثی رموز

لحمیاتی تالیف