جنید صدیق

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
جنید صدیق
Junaid Siddique training, 23 January, 2009, Dhaka SBNS.jpg
صدیق 23 جنوری 2009ء میں
ذاتی معلومات
مکمل ناممحمد جنید صدیق
پیدائش30 اکتوبر 1987ء (عمر 35 سال)
راجشاہی، بنگلہ دیش
عرفامروز
قد1.85 میٹر (6 فٹ 1 انچ)
بلے بازیبائیں ہاتھ کا بلے باز
گیند بازیدائیں ہاتھ کا آف بریک گیند باز
حیثیتبلے باز
بین الاقوامی کرکٹ
قومی ٹیم
پہلا ٹیسٹ (کیپ 48)4 جنوری 2008  بمقابلہ  نیوزی لینڈ
آخری ٹیسٹ13 نومبر 2012  بمقابلہ  ویسٹ انڈیز
پہلا ایک روزہ (کیپ 85)26 دسمبر 2007  بمقابلہ  نیوزی لینڈ
آخری ایک روزہ19 اگست 2011  بمقابلہ  زمبابوے
پہلا ٹی2020 ستمبر 2007  بمقابلہ  پاکستان
آخری ٹی2026 جولائی 2012  بمقابلہ  نیدرلینڈز
ملکی کرکٹ
عرصہٹیمیں
2003– تاحالراجشاہی ڈویژن
2012دورنتو راجشاہی
2013رنگپور رائیڈرز
2015– تاحالسلہٹ سپر سٹارز
2021-22مراٹھا عریبین
کیریئر اعداد و شمار
مقابلہ ٹیسٹ ایک روزہ فرسٹ کلاس لسٹ اے
میچ 19 54 61 116
رنز بنائے 969 1,196 3,003 2,929
بیٹنگ اوسط 26.18 23.00 27.80 25.92
100s/50s 1/7 1/6 4/16 3/17
ٹاپ اسکور 106 100 181 120
گیندیں کرائیں 18 12 209 47
وکٹ 0 0 1 0
بالنگ اوسط 130.00
اننگز میں 5 وکٹ 0
میچ میں 10 وکٹ 0
بہترین بولنگ 1/30
کیچ/سٹمپ 11/– 22/– 47/– 44/–
ماخذ: Cricinfo، 14 دسمبر 2013

محمد جنید صدیق (پیدائش: 30 اکتوبر 1987ء) ایک بنگلہ دیشی کرکٹر ہے۔ اسے بعض اوقات ان کے عرفی نام سے بھی جانا جاتا ہے۔ بائیں ہاتھ کے بلے باز اور کبھی کبھار رائٹ آرم آف بریک بولر، اس نے 2003/04ء میں راجشاہی ڈویژن کے لیے ڈیبیو کیا اور 2006/07ء کے سیزن میں کھیلا۔ انہوں نے 2007/08ء میں نیوزی لینڈ کے دورے کے دوران ٹیسٹ اور ون ڈے میں ڈیبیو کیا۔

ابتدائی زندگی[ترمیم]

صدیق 30 اکتوبر 1987ء کو راجشاہی ، بنگلہ دیش میں ایک پنجابی مسلمان گھرانے میں پیدا ہوئے۔ ان کے دادا اور والد کا تعلق اصل میں پنجاب، پاکستان کے سیالکوٹ سے تھا لیکن وہ 1971ء میں بنگلہ دیش کی آزادی کی جنگ سے پہلے 1968ء میں مشرقی پاکستان (موجودہ بنگلہ دیش) چلے گئے تھے۔ وہ آزادی کے بعد بنگلہ دیش میں ہی رہے۔

ڈومیسٹک کیریئر[ترمیم]

صدیق نے ایک فرسٹ کلاس سنچری، کھلنا ڈویژن کے خلاف ناٹ آؤٹ 114 رنز بنائے، اور چٹاگانگ ڈویژن کے خلاف محدود اوورز کی سنچری، 104 رنز بھی بنائے۔ وہ 2006/07ء میں بنگلہ دیش اے کے لیے پیش ہوئے۔ صدیق نے ستمبر 2007ء کے دوران ٹوئنٹی 20 انٹرنیشنل ورلڈ کپ میں بنگلہ دیش کے لیے اپنا ڈیبیو کیا۔ انہوں نے پاکستان کے خلاف ڈیبیو پر 71 رنز بنائے، کلائی کے اسٹروک پلے سے بھری اننگز میں 6 چوکے اور 3 چھکے لگائے۔ صدیق نے 2010ء میں ان کے اور تمیم اقبال کے درمیان بنگلہ دیشی ریکارڈ کے ایک حصے کے طور پر ہندوستان کے خلاف نصف سنچری بنائی تھی۔ وہ 2017–18 ڈھاکہ پریمیئر ڈویژن کرکٹ لیگ میں برادرز یونین کے لیے 13 میچوں میں 542 رنز کے ساتھ سب سے زیادہ رنز بنانے والے کھلاڑی تھے۔ [1] وہ 2018-19 نیشنل کرکٹ لیگ میں راجشاہی ڈویژن کے لیے چھ میچوں میں 404 رنز کے ساتھ سب سے زیادہ رنز بنانے والے کھلاڑی بھی تھے۔ [2] اکتوبر 2018 ءمیں اسے 2018-19 بنگلہ دیش پریمیئر لیگ کے ڈرافٹ کے بعد کھلنا ٹائٹنز ٹیم کے اسکواڈ میں شامل کیا گیا۔ [3] وہ ٹورنامنٹ میں ٹیم کے لیے سب سے زیادہ رنز بنانے والے کھلاڑی تھے، انہوں نے بارہ میچوں میں 298 رنز بنائے۔ [4] نومبر 2019ء میں اسے 2019-20 بنگلہ دیش پریمیئر لیگ میں چٹوگرام چیلنجرز کے لیے کھیلنے کے لیے منتخب کیا گیا۔ [5]

بین الاقوامی کیریئر[ترمیم]

دسمبر 2007ء میں صدیق کو نیوزی لینڈ کے دورے کے لیے ٹیسٹ اور ون ڈے ٹیموں میں منتخب کیا گیا۔ 26 دسمبر 2007ء کو اس نے اپنا ODI ڈیبیو کیا، بیٹنگ کا آغاز کرتے ہوئے اس نے 13 رنز بنائے۔ 4 جنوری 2008 کو اس نے اپنا ٹیسٹ ڈیبیو کیا، اس نے بنگلہ دیش کی دوسری اننگز میں ساتھی ڈیبیو کرنے والے تمیم اقبال کے ساتھ 161 رنز کے اوپننگ اسٹینڈ میں 74 رنز بنائے۔ یہ اسٹینڈ بنگلہ دیش کے لیے پہلی وکٹ کا ریکارڈ ہے [6] اور ڈیبیو کرنے والوں کی طرف سے بنایا گیا تیسرا سب سے بڑا سیٹ۔ صدیقی نے فروری میں ایک ٹیسٹ میچ میں جنوبی افریقہ کے خلاف 74 رنز بنائے تھے۔ [7] اور یہ ڈیبیو کرنے والے اوپنرز کے لیے دوسری سب سے زیادہ شراکت داری بھی ہے۔ [7] انہوں نے اپنی پہلی ون ڈے سنچری 2010ء میں آئرلینڈ کے خلاف کھوئی ہوئی وجہ سے بنائی تھی۔ ورلڈ کپ میں ان کی خراب فارم کی وجہ سے انہیں آسٹریلیا کے دورہ بنگلہ دیش کے لیے ڈراپ کر دیا گیا تھا۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Dhaka Premier Division Cricket League, 2017/18: Brothers Union". ESPN Cricinfo. اخذ شدہ بتاریخ 05 اپریل 2018. 
  2. "National Cricket League, 2018/19 - Rajshahi Division: Batting and bowling averages". ESPN Cricinfo. اخذ شدہ بتاریخ 08 نومبر 2018. 
  3. "Full players list of the teams following Players Draft of BPL T20 2018-19". Bangladesh Cricket Board. 28 مارچ 2019 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 29 اکتوبر 2018. 
  4. "Bangladesh Premier League, 2018/19 - Khulna Titans: Batting and bowling averages". ESPN Cricinfo. اخذ شدہ بتاریخ 02 فروری 2019. 
  5. "BPL draft: Tamim Iqbal to team up with coach Mohammad Salahuddin for Dhaka". ESPN Cricinfo. اخذ شدہ بتاریخ 18 نومبر 2019. 
  6. Tests – Bangladesh's highest partnerships by wicket, ای ایس پی این کرک انفو, Retrieved on 7 January 2008
  7. ^ ا ب Tests – Highest partnership by debutants, ای ایس پی این کرک انفو, Retrieved on 7 January 2008