رفیق غزنوی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
رفیق غزنوی
معلومات شخصیت
پیدائش 1907ء
راولپنڈی،  برطانوی ہند  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات مارچ 2، 1974(1974-03-02)ء
کراچی،  سندھ،  پاکستان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
قومیت Flag of پاکستانپاکستانی
زوجہ انوری بیگم
عملی زندگی
تعليم بی اے
مادر علمی گورڈن کالج راولپنڈی
پیشہ اداکار،  موسیقار،  نغمہ ساز،  گلو کار  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں آئی ایم ڈی بی - آئی ڈی (P345) ویکی ڈیٹا پر

رفیق غزنوی (انگریزی: Rafiq Ghaznavi) (پیدائش: 1907ء — وفات: 2 مارچ 1974ء) پاکستان سے تعلق رکھنے والے برِ صغیر پاک ہند کے نامور فلمی موسیقار، اداکار اور گلوکار تھے۔

حالات زندگی[ترمیم]

رفیق غزنوی 1907ء کو راولپنڈی، برطانوی ہندوستان (موجودہ پاکستان) میں پیدا ہوئے [1][2]۔ انہوں نے گورڈن کالج راولپنڈی سے گریجویشن کیا۔ انہوں نے استاد عبد العزیز خان صاحب سے موسیقی کے اسرار سیکھے، موسیقی سے ان کا شغف اتنا بڑھا کہ موسیقی کے کسی گھرانے سے تعلق نہ ہونے کے باوجود ان کا شمار برصغیر کے صف اول کے موسیقاروں میں ہوا۔[1]

رفیق غزنوی نے اپنے فلمی کیریر کا آغاز اداکاری سے کیا۔ انہوں نے لاہور میں بننے والی پہلی ناطق فلم ہیر رانجھا میں مرکزی کردار ادا کیا تھا۔ انہوں نے اس فلم کی موسیقی بھی ترتیب دی تھی اور اپنے اوپر فلم بند ہونے والے تمام نغمات بھی خود گائے تھے۔ بعد ازاں رفیق غزنوی دہلی چلے گئے جہاں وہ آل انڈیا ریڈیو سے وابستہ ہو گئے۔ بعد ازاں وہ بمبئی منتقل ہوئے جہاں انہوں نے فلم پونرملن، لیلیٰ مجنوں اور سکندر سمیت کئی فلموں کی موسیقی ترتیب دی۔ ہالی وڈ کی ایک مشہور فلم تھیف آف بغداد میں بھی ان کی موسیقی استعمال کی گئی۔تقسیم ہند کے بعد وہ کراچی میں منتقل ہو گئے اور ریڈیو پاکستان سے وابستہ ہوئے۔ وہ اس کمیٹی کے رکن تھے جس نے پاکستان کے قومی ترانے کی دھن منظور کی تھی مگر بعد ازاں ریڈیو پاکستان کے ڈائریکٹر جنرل زیڈ اے بخاری سے اختلافات کے باعث انہوں نے ریڈیو پاکستان سے علیحدگی اختیار کرلی۔[1]

رفیق غزنوی نے برصغیر کی تقسیم سے قبل بڑا عروج دیکھا۔ مگر تقسیم ہند کے بعد اپنی زندگی کا بڑا حصہ ایک غیر تخلیقی فنکار کی حیثیت سے بسر کیے۔[1]

پاکستان اور بھارت کی معروف اداکارہ سلمیٰ آغا، رفیق غزنوی کی نواسی ہیں۔ جب کہ معروف فلمی ہدایت کار ضیا سرحدی ان کے داماد تھے اور یوں خیام سرحدی بھی ان کے نواسے ہوتے ہیں۔[1]

وفات[ترمیم]

رفیق غزنوی 2 مارچ، 1974ء کو کراچی، پاکستان میں وفات پاگئے۔[1][2]

حوالہ جات[ترمیم]