مشتاق احمد يوسفی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
مشتاق احمد یوسفی
پیدائش مشتاق احمد یوسفی
23 ستمبر 1923 (1923-09-23) ‏(91)
ٹونک راجھستان، بھارت
پیشہ بینکاری، اور مزاح نگاری
نسل راجھستانی
شہریت پاکستانی
تعلیم ایم اے فلسفہ ـ ایل ایل بی
مادر علمی علی گڑھ مسلم یونیورسٹی
دور 1961 تا حال
صنف مزاح نگاری
نمایاں کام خاکم بدہن، زرگزشت
آب گم ، چراغ تلے ، شامِ شعرِیاراں
اہم اعزازات کمالِ فن ایوارڈ، آدم جی ایوارڈ، بابائے اردو مولوی عبدالحق ایوارڈ، ستارہ امتیاز، ہلال امتیاز حکومتِ پاکستان

مشتاق احمد یوسفی, ستارہ امتیاز، ہلال امتیاز ، ڈی-لٹ(اعزازی) کا شمار اردو زبان کے عظیم ترین مزاح نگاروں میں ہوتا ہے۔

سوانح[ترمیم]

مشتاق احمد یوسفی کی پیدائش4 ستمبر 1923 (صحیح 4ستمبر 1921) ریاست ٹونک، راجھستان ہندوستان میں ہوئی۔ آپ نے ابتدائی تعلیم راجپوتانہ، ایم-اے (فلسفہ) آگرہ یونیورسٹی، ایل۔ایل۔بی مسلم علیگڑہ یونیورسٹی سی حاصل کی۔ تقسیم ہند کے بعد کراچی تشریف لے آئے اور مسلم کمرشل بینک میں ملازمت اختیار کی۔

ابتدائی حالات[ترمیم]

حالات زندگی[ترمیم]

علمی خدمات[ترمیم]

اب تک ان کی پانچ کتابیں شائع ہوچکی ہیں۔


اعزازات[ترمیم]

آپ کی ادبی خدمات کے پیش نظر حکومت پاکستان نے 1999 میں ستارہ امتیاز اور ہلال امتیاز کے تمغوں سے نوازا۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ بی بی سی اردو، مشتاق احمد یوسفی کی نئی کتاب کی تقریب رونمائی ساتویں اردو عالمی کانفرس، کراچی میں۔16 اکتوبر 2014

بیرونی روابط[ترمیم]

http://ghubar-e-khater.blogspot.com/2009/04/blog-post_26.html