وینیڈیئم

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
Vanadium
23V
Hydrogen (diatomic nonmetal)
Helium (noble gas)
Lithium (alkali metal)
Beryllium (alkaline earth metal)
Boron (metalloid)
Carbon (polyatomic nonmetal)
Nitrogen (diatomic nonmetal)
Oxygen (diatomic nonmetal)
Fluorine (diatomic nonmetal)
Neon (noble gas)
Sodium (alkali metal)
Magnesium (alkaline earth metal)
Aluminium (post-transition metal)
Silicon (metalloid)
Phosphorus (polyatomic nonmetal)
Sulfur (polyatomic nonmetal)
Chlorine (diatomic nonmetal)
Argon (noble gas)
Potassium (alkali metal)
Calcium (alkaline earth metal)
Scandium (transition metal)
Titanium (transition metal)
Vanadium (transition metal)
Chromium (transition metal)
Manganese (transition metal)
Iron (transition metal)
Cobalt (transition metal)
Nickel (transition metal)
Copper (transition metal)
Zinc (transition metal)
Gallium (post-transition metal)
Germanium (metalloid)
Arsenic (metalloid)
Selenium (polyatomic nonmetal)
Bromine (diatomic nonmetal)
Krypton (noble gas)
Rubidium (alkali metal)
Strontium (alkaline earth metal)
Yttrium (transition metal)
Zirconium (transition metal)
Niobium (transition metal)
Molybdenum (transition metal)
Technetium (transition metal)
Ruthenium (transition metal)
Rhodium (transition metal)
Palladium (transition metal)
Silver (transition metal)
Cadmium (transition metal)
Indium (post-transition metal)
Tin (post-transition metal)
Antimony (metalloid)
Tellurium (metalloid)
Iodine (diatomic nonmetal)
Xenon (noble gas)
Caesium (alkali metal)
Barium (alkaline earth metal)
Lanthanum (lanthanide)
Cerium (lanthanide)
Praseodymium (lanthanide)
Neodymium (lanthanide)
Promethium (lanthanide)
Samarium (lanthanide)
Europium (lanthanide)
Gadolinium (lanthanide)
Terbium (lanthanide)
Dysprosium (lanthanide)
Holmium (lanthanide)
Erbium (lanthanide)
Thulium (lanthanide)
Ytterbium (lanthanide)
Lutetium (lanthanide)
Hafnium (transition metal)
Tantalum (transition metal)
Tungsten (transition metal)
Rhenium (transition metal)
Osmium (transition metal)
Iridium (transition metal)
Platinum (transition metal)
Gold (transition metal)
Mercury (transition metal)
Thallium (post-transition metal)
Lead (post-transition metal)
Bismuth (post-transition metal)
Polonium (post-transition metal)
Astatine (metalloid)
Radon (noble gas)
Francium (alkali metal)
Radium (alkaline earth metal)
Actinium (actinide)
Thorium (actinide)
Protactinium (actinide)
Uranium (actinide)
Neptunium (actinide)
Plutonium (actinide)
Americium (actinide)
Curium (actinide)
Berkelium (actinide)
Californium (actinide)
Einsteinium (actinide)
Fermium (actinide)
Mendelevium (actinide)
Nobelium (actinide)
Lawrencium (actinide)
Rutherfordium (transition metal)
Dubnium (transition metal)
Seaborgium (transition metal)
Bohrium (transition metal)
Hassium (transition metal)
Meitnerium (unknown chemical properties)
Darmstadtium (unknown chemical properties)
Roentgenium (unknown chemical properties)
Copernicium (transition metal)
Nihonium (unknown chemical properties)
Flerovium (unknown chemical properties)
Moscovium (unknown chemical properties)
Livermorium (unknown chemical properties)
Tennessine (unknown chemical properties)
Oganesson (unknown chemical properties)


V

Nb
ٹائی ٹینیئمvanadiumchromium
Vanadium in the دوری جدول
ظاہرییت
blue-silver-grey metal
عام خصوصیات
نام, علامت, نمبر vanadium, V, 23
گروپ, پيريڈ, بلاک 5, 4, d
معیاری ایٹمی وزن {{{atomic mass}}}
الیکٹران تشکیل [Ar] 3d3 4s2
2, 8, 11, 2
طبعی خصوصیات
حالت solid
کثافت (near r.t.) 6.0 g·cm−3
Liquid density at m.p. 5.5 g·cm−3
نقطہ پگھلاؤ 2183 K, 1910 °C, 3470 °F
نقطہ کھولاؤ 3680 K, 3407 °C, 6165 °F
Heat of fusion 21.5 kJ·mol−1
Heat of vaporization 444 kJ·mol−1
مولر حرارت گنجائش 24.89 J·mol−1·K−1
Vapor pressure
P (Pa) 1 10 100 1 k 10 k 100 k
at T (K) 2101 2289 2523 2814 3187 3679
جوہری خصوصیات
تکسید حالت 5, 4, 3, 2, 1, −1, −3
((an amphoteric oxide))
برقی منفیت 1.63 (Pauling scale)
آیونائزیشن توانائیاں
(مزید)
1st: {{{1st ionization energy}}} kJ·mol−1
2nd: {{{2nd ionization energy}}} kJ·mol−1
3rd: {{{3rd ionization energy}}} kJ·mol−1
Atomic radius 134 pm
شریک گرفتی رداس 153±8 pm
متفرقات
کرسٹل ساخت body-centered cubic
Vanadium has a body-centered cubic crystal structure
مقناطیسی ترتیب paramagnetic
برقی مزاحمیت (20 °C) 197Ω·m
حرارتی موصلیت 30.7 W·m−1·K−1
حرارتی پھیلاؤ (25 °C) 8.4 µm·m−1·K−1
Speed of sound (thin rod) (20 °C) 4560 m·s−1
Young's modulus 128 GPa
Shear modulus 47 GPa
Bulk modulus 160 GPa
Poisson ratio 0.37
Mohs hardness 6.7
Vickers hardness 628–640 MPa
Brinell hardness 600–742 MPa
CAS registry number 7440-62-2
تاریخ
Discovery Andrés Manuel del Río (1801)
First isolation Nils Gabriel Sefström (1830)
Named by Nils Gabriel Sefström (1830)
سب سے زیادہ مستحکم ہم جاء (آئسوٹوپ)
Main article: Isotopes of vanadium
iso NA half-life DM DE (MeV) DP
48V syn 16 d β+ 4.0123 48Ti
49V syn 330 d ε 0.6019 49Ti
50V 0.25% 1.5×1017 y ε 2.2083 50Ti
بیٹا تنزل 1.0369 50Cr
51V 99.75% 51V is stable with 28 neutrons
· references

وینیڈیئم (Vanadium) ایک عنصر ہے جو دھاتی شکل رکھتا ہے۔ علم کیمیاء میں اس V سے ظاہر کیا جاتا ہے۔ یہ دھات 1830ء میں دریافت ہوئی تھی۔ اس کا ایٹمی نمبر 23 ہے یعنی اس کے ہر ایٹم میں 23 پروٹون ہوتے ہیں۔ یہ ایک چاندی جیسی سرمئی چمک رکھتا ہے۔ یہ بہت سخت ہوتا ہے اور اس سے تار اور ورق بنائے جا سکتے ہیں۔ ایلومینیئم اور کرومیئم کی طرح ہوا کی آکسیجن اس سے عمل کر کے اس کی سطح پر آکسائیڈ (زنگ) کی ایک تہ (passivation layer) جما دیتی ہے جس میں سے مزید آکسیجن نہیں گزر سکتی۔ اس طرح باقی ایٹموں کو زنگ نہیں لگتا۔
وینیڈیئم کے مرکبات نہایت رنگین ہوتے ہیں۔ وینیڈیئم کے مرکبات زہریلے ہوتے ہیں۔
اسٹیل میں وینیڈیئم کی ملاوٹ کرنے سے اسٹیل نہایت مضبوط ہو جاتا ہے۔ ایسے اسٹیل سے وہ اوزار بنائے جاتے ہیں جو تیز رفتار مشینوں میں استعمال ہوتے ہیں۔
وینیڈیئم کا سب سے اہم استعمال وینیڈیئم پینٹا آکسائیڈ کی شکل میں ہوتا ہے جو گندھک کے تیزاب کی تیاری میں بطور عمل انگیز (catalyst) استعمال ہوتا ہے اور سلفر ڈائی آکسائیڈ کو سلفر ٹرائی آکسائیڈ میں تبدیل کر دیتا ہے۔

ہم جا[ترمیم]

قدرتی طور پر پائے جانے والے وینیڈیئم کا 99.75% حصہ وینیڈیئم51 پر مشتمل ہوتا ہے جو پائیدار (غیر تابکار) ہوتا ہے۔ باقی 0.25% حصہ وینیڈیئم50 پر مشتمل ہوتا ہے جو اگرچہ تابکار ہوتا ہے مگر اس کی تابکاری انتہائی کم ہوتی ہے کیونکہ اس کی نصف حیات اربوں ارب سال (1.5×1017 سال) ہوتی ہے۔

فراوانی[ترمیم]

فراوانی کے اعتبار سے دنیا میں وینیڈیئم 20 ویں نمبر پر ہے یعنی بہت فراواں نہیں ہے۔[1] اگرچہ یہ 65 کچ دھاتوں میں پایا جاتا ہے مگر اس کی اہم کچ دھات patrónite (VS4),[2] vanadinite (Pb5(VO4)3Cl), اور carnotite (K2(UO2)2(VO4)2·3H2O) ہیں۔ چونکہ magnetite میں بھی اکثر وینیڈیئم موجود ہوتا ہے اس لیے لوہے کے حصول کے دوران وینیڈیئم ضمنی پیداوار کے طور پر حاصل ہوتا ہے۔

وینیڈیئم اسٹیل سے بنے اوزار

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Proceedings (en زبان میں)۔ National Cotton Council of America۔ 1991۔ 
  2. "mineralogical data about Patrónite"۔ mindata.org۔ اخذ کردہ بتاریخ 19 January 2009۔