متی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
مقدس متی حواری / رسول
متی حواری کا مجسمہ تیرویں صدی کے ایک کلیسا میں , ہنگری .
حواری,(مبشر)مبلغ, گواہ
قابل احترام کیتھولک کلیسا
راسخُ الا عتقاد کلیسا
مشرقی کیتھولک
اینگلیکن کلیسا
لوتھریت
Aglipayan کلیسا
some other پروٹسٹنٹ Churches
تعظيم و تکريم pre-congregation, Russia by St. John
اہم مزار اٹلی
ضیافت 21 ستمبر(مغربی مسیحی)
16 نومبر (مشرقی مسیحی)
خصوصیات خدا کا قاصد
سرپرستی

حساب دار،

ساہوکار، محصول دار، سرکاری ملازم[1]

عہد نامہ جدید کی پہلی انجیل کا مصنف۔[2]۔ اسی کو "لاوی" بھی کہتے ہیں۔[3]

ابتدائی زندگی[ترمیم]

متی جلیل میں سن ایک عیسوی میں حلفی کے گھر پیدا ہوا۔[4]یہودیوں میں دو نام رکھنے کا رواج تھا، اسطرح متی کے بھی دو نام ہیں۔متی اور لاوی۔پیشے کے اعتبار سے متی رومی حکومت کا کارندہ تھا جو محصوللینے کا کام کرتا۔[5] یہودی اس سے اور اس کے باقی ساتھی کارندوں سے نفرت کرتے کیونکہ یہ لوگ تشدد کر کے محصول وصول کرتے اور رومی اس وقت اسرائیلیوں پر حکمران تھےاس وجہ سے ہم وطن لوگ اس سے نفرت کرتے تھے۔[6]

مسیح سے ملاقات[ترمیم]

متی کی انجیل میں متی کے مسیح پر ایمان لانے کا واقعہ لکھا سے متی کے ایمان لانے کے واقعے کو ہم ایک معجزہ کہہ سکتے ہیں۔ متی میں ہے

یسوع نے وہاں سے آگے بڑھ کر متی نام کے ایک شخص کو محصول کی چوکی پر بیٹھے دیکھا اور اس سے کہا میرے پیچھے ہو لے۔وہ اٹھ کر اس کے پیچھے ہو لیا۔

[7]۔پھر متی نے مسیح کی دعوت کی جس میں کچھ محصول لینے والے بھی تھے، یہ دیکھ کر یہودی مسیح کے خلاف باتیں کرنے لگے۔[8]متی کا ذکر اس کے عہاوہ مزید کسی جگہ نہیں ہوا۔[9]

مسیح کے بعد[ترمیم]

حضرت مسیح کے رفع آسمان کے بعد مسیحی روایات صرف اتنا بتاتی ہیں کہ 15 برس تک متی فلسطین میںمنادی کرتا رہا۔[10]

متی کی انجیل[ترمیم]

متی نے انجیل کی بنیاد، مرقس کی انجیل اور وہ ماخذ جس سے خود مرقس نے مواد حاصل کیا تھا دونوں کو بنیاد بنا کر عبرانی میں انجیل لکھی۔اس کے سن تصنیف میں مختلف آراء ہیں، 45ء سے لے کر 100ء تک کے سنین کتب تاریخ میں درج ہیں،بنیاد پرست مسیحی اس بات پر زرو دیتے ہیں کہ 45ء میں عبرانی میں اور 50ء تا 55ء میں یونانی میں متی نی انجیل لکھی۔[11][12][13]، لیکن اب تک کی تحقیق سے قدیم ترین متی کی انجیل کا نسخہ یونانی میں ہی ملا ہے جو 170ء کے بعد کا ہے۔[14]اصل نسخہ جو عبرانی میں تھا۔آج وہ دنیا میں کسی جگہ نہیں۔

متی سے منسوب کتابیں[ترمیم]


مزید دیکھیے[ترمیم]


حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ Cathedral of St. Matthew the Apostle, Washington, D.C.
  2. ^ جی ٹی مینلی، ہماری کتب مقدسہ، صفحہ 451
  3. ^ مرقس14:2
  4. ^ https://en.wikipedia.org/wiki/Matthew_the_Apostle
  5. ^ متی، 9:9
  6. ^ تفسیر الکتاب،جلد1، صفحہ 99
  7. ^ متی، 9:9
  8. ^ لوقا، 29:5
  9. ^ قاموس الکتاب، صفحہ 877
  10. ^ تفسیر الکتاب،جلد 1، صفحہ22
  11. ^ ہماری کتب مقدسہ، صفحہ451
  12. ^ تفسیر الکتاب، صفحہ23
  13. ^ قاموس الکتاب، صفحہ880
  14. ^ حیات سیدنا عیسی علیہ السلام، صفحہ219
  15. ^ آکسی ہومو، مطبوعہ لندن 1813
‘‘http://ur.wikipedia.org/w/index.php?title=متی&oldid=1011781’’ مستعادہ منجانب