نطشے

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
نطشے

نطشے (Friedrich Nietzsche) (1900-1844) انیسویں صدی کا جرمن فلسفی تھا۔ اسکے خیال میں طاقت ہی انسانی معاملات میں فیصلہ کن عنصر ہے۔ اس نے فوق البشر (Superman) کے تصور کو آگے بڑھایا۔

نطشے کی تشکیل[ترمیم]

نطشے 15 اکتوبر 1844 کو روکن پرشیا مں پیدا ہوا۔ پرشیا فوجی اور سیاسی لحاظ ایک طاقتور ریاست بنتا جا رہا تھا۔ آسٹریا کو وہ جرمن معاملات سے علیحدہ کر چکا تھا۔ 1871 میں پرشیا نے نپولین کی فتوحات کے نشے میں چور فرانس کو بد ترین شکست دی اور ورسائی پیرس کے مقام پر تمام چھوٹی چھوٹی جرمن ریاستوں کو متحد کر کے جرمن سلطنت کی بنیاد رکھی۔ نطشے اس ابھرتی ہوئی طاقتور جرمن سلطنت کی آواز بن گيا۔

نظریات[ترمیم]

دلچسپ باتیں[ترمیم]

  • بقول امریکی فلسفی ول ڈیورنٹ کے نطشے ڈارون کا بیٹا اور بسمارک کا بھائی تھا۔
  • اقبال تعلیم کے لیۓ جرمنی جاتا ہے اور نطشے سے متاثر ہو کر آتا ہے یہ بات جرمنی جانے سے پہلے اور بعد میں اقبال کی شاعری میں واضح طور پر محسوس کی جا سکتی ہے۔ اقبال کا مرد مومن کا تصور نطشے کے فوق البشر کے بہت قریب ہے۔

کتابیں[ترمیم]

  • Thus Spake Zarathustara
Incomplete-document-purple.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کرکے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔

‘‘http://ur.wikipedia.org/w/index.php?title=نطشے&oldid=780812’’ مستعادہ منجانب