ملائم سنگھ یادو

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ملائم سنگھ یادو
Mulayam Singh Yadav (28993165375).jpg 

معلومات شخصیت
پیدائش 22 نومبر 1939 (80 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
سیفائی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
شہریت Flag of India.svg بھارت[1]
British Raj Red Ensign.svg برطانوی ہند  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
جماعت سماج وادی پارٹی[1]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں سیاسی جماعت کی رکنیت (P102) ویکی ڈیٹا پر
اولاد اکھلیش یادو  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں اولاد (P40) ویکی ڈیٹا پر
مناصب
وزیر اعلیٰ اتر پردیش[3]   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں منصب (P39) ویکی ڈیٹا پر
دفتر میں
5 دسمبر 1989  – 24 جون 1991 
وزیر اعلیٰ اتر پردیش[3]   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں منصب (P39) ویکی ڈیٹا پر
دفتر میں
4 دسمبر 1993  – 3 جون 1995 
وزیر اعلیٰ اتر پردیش[3]   خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں منصب (P39) ویکی ڈیٹا پر
دفتر میں
29 اگست 2003  – 13 مئی 2007 
Fleche-defaut-droite-gris-32.png مایاوتی 
مایاوتی  Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
عملی زندگی
مادر علمی جامعہ ڈاکٹر بھیم راؤ امبیڈکر آگرہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تعلیم از (P69) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ سیاست دان[1]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر

ہندوستانی سیاست دان۔ سماجوادی پارٹی کے بانی۔ اترپردیش اسمبلی میں حزب اختلاف کے سربراہ۔ تین بار اترپردیش کے وزیراعلی رہے۔ مرکز میں وزیردفاع کے عہدے پر بھی فائز رہے ملائم سنگھ کی پیدا‎ئش بائیس نومبر 1939 کو ایک متوسط یادو خاندان میں ہوئی۔ وہ پہلی بار 1969 میں اسمبلی کے لیے منتخب ہوئے۔ سن 1977 میں وہ پہلی بار اترپردیش اسمبلی میں وزیر بنے۔ 1989ء میں یو پی کے وزیراعلی بنے۔ وزیراعلی کے طور پر اپنی حکومت کے پہلے دور میں ملائم سنگھ یادو کی سیکولر رہنما کی امیج بنی۔ ان کے ناقدوں نے انہیں ’مولانا ملائم‘ تک کہہ ڈالا۔ دوسری بار وہ بہوجن سماج پارٹی کے تعاون سے 1993 میں وزیراعلی بنے۔ لیکن یہ شراکت زیادہ دیر نہ چل سکی۔ سماجوادی پارٹی فروری 2002 میں اترپردیش اسمبلی میں سب سے بڑی جماعت کی شکل میں سامنے آئی، لیکن اسے اکثریت حاصل نہ ہو سکی۔ وہ سن 2003 میں پھر وزیراعلی بنے لیکن 2007 میں ان کی پارٹی انتخابات ہار گئی۔ ان کی پہچان پسماندہ طبقے کی سیاست کرنے والے ایک سیکولر رہنما کے طور پر ہوتی ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]