سوار خان

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
جنرل
سوار خان
(نائب رئیس عملہ پاک فوج لیفٹیننٹ جنرل سوار خان)
تیرہویں گورنر پنجاب
عہدہ سنبھالا
ستمبر 1978 – مارچ 1980
صدر ضیاء الحق
پیشرو اسلم ریاض حسین
جانشین لیفٹیننٹ جنرل غلام جیلانی خان
ذاتی تفصیلات
پیدائش محمد سوار خان
ضلع راولپنڈی، برطانوی راج
قومیت پاکستان
مادر علمی پاکستان ملٹری اکیڈیمی
پیشہ سپاہی، جنرل
اعزازات نشان امتیاز (عسکری)
فوجی خدمات
Allegiance Flag of Pakistan.svg پاکستان
سروس/شاخ  پاکستان فوج
سالہائے خدمات 19??-1984
عہدہ جنرل
کماندز ایڈجوٹنٹ جنرل (AG)
XI کور، پشاور
IV کور، لاہور
نائب رئیس عملہ پاک فوج (VCOAS)
لڑائیاں/جنگیں پاک بھارت جنگ 1965ء
پاک بھارت جنگ 1971ء
بعد از ریٹارئرمنٹ سول سرونٹ اور سابقہ گورنر پنجاب
سابقہ نیب

جنرل محمد سوار خان پاک فوج کے چار ستارے والے سابقہ جنرل ہیں۔ وہ پاکستان کے سب سے بڑے صوبے پنجاب کے گورنر اور جرنل ضیاء الحق کے دور میں نائب رئیس عملہ پاک فوج کے عہدے پر بھی فائز رہے، اس وقت ضیاء الحق مشترکہ طور پر رئیس عملہ جامع اور صدر پاکستان بھی تھے۔

سیاسی دفاتر
پیشتر
اسلم ریاض حسین
گورنر پنجاب
1978 – 1980
اگلا
غلام جیلانی خان
فوجی دفاتر
پیشتر
اقبال خان
نائب رئیس عملہ پاک فوج
1980 – 1984
اگلا
خالد محمود عارف