ایمی بائی جناح

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ایمی بائی جناح

مدت منصب
1892 – 1893
معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1878  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
کراچی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات سنہ 1893 (14–15 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
ممبئی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
شوہر محمد علی جناح (1892–1893)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شریک حیات (P26) ویکی ڈیٹا پر
رشتے دار فاطمہ جناح (بهابی)[1][2]

ایمی بائی جناح (1893ء-1878ء) محمد علی جناح کی چچازاد تھیں اور ان کی پہلی بیوی بھی تھیں۔ ان کا اصل نام سکینہ تھا جبکہ انہیں امر بائی بھی کہاجاتا تھا۔ ان کے والد کانام سرکھیم جی تھا۔ ایمی بائی کی محمد علی جناح سے شادی 1892ء میں ہوئی تھی، جب ان کی عمر صرف 14 سال جبکہ محمد علی جناح 16 سال کے تھے۔ اس موقع پر صرف سادگی سے نکاح پڑھایا گیا اور عام رسومات میں رخصتی طے کی گئی۔ شادی کے فوراً بعد محمد علی جناح انگلستان کے لیے روانہ ہو گئے۔ جب قائد اعظم وکالت کی تعلیم کے لیے لندن میں مقیم تھے تو کراچی میں متعدی وبا پھیل گئی اس وبا میں نوعمر دولہن سکینہ بائی اور قائد اعظم کی والدہ شیریں عرف مٹھی بائی انتقال کرگئیں۔ ایمی بائی سے قائد اعظم کی کوئی اولاد نہ تھی اس لیے تاریخ کے اوراق خاموش ہیں۔ جب قائد اعظم واپس آئے تو ایمی بائی کا انتقال ہو چکا تھا۔ ایمی بائی کی موت کا صدمہ ہی تھا کہ محمد علی جناح کافی عرصہ تک دوبارہ شادی کرنے پر مائل نہ ہوئے۔
ایمی بائی کی وفات کے کئی سالوں بعد 1918ء میں محمد علی جناح نے رتن بائی پیتت سے شادی کی جو معروف پارسی بینکار ڈنشا پیتت کی صاحبزادی تھیں۔
نکاح سے قبل رتن پٹیٹ مسلمان ہوئیں قبول اسلام کے بعد نا م مریم جناح رکھاگیا تاہم وہ رتی کے نام سے ہی مشہور رہی۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Fatima Jinnah (2003)۔ "How Fatima Jinnah died — an unsolved criminal cas"۔ Dawn News۔ موہٹہ پیلس: Jinnah of 2003۔ صفحہ 1۔ 
  2. Fatima Jinnah J (1893)۔ "Fatima Jinnah"۔ Karachi۔ صفحہ 1۔ 
  3. Jinnahbai Khan۔ "THE FAMILY OF OUR GREAT LEADER QUAID-E-AZAM MUHAMMAD ALI JINNAH"۔ صفحہ 1۔ 
  4. Ali Jinnah (1892)۔ "Jinnah's personal life"۔ Wordpress۔ ممبئی: Jinnah Merchant۔