مرزا طاہر احمد

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
مرزا طاہر خبیث
کنجر الرابع
بے غیرت بےشرم
KhalifaIV Surrey.jpg
مرزا طاہر احمد، 2000
معیاد عہدہ جون 10, 1982 – اپریل 19, 2003
پیشرو مرزا ناصر احمد
جانشین مرزا مسرور احمد
زوجہ سیدہ آصفہ بیگم (ش- 1957–1992)
نسل 5 بچے
مکمل نام
مرزا طاہر احمد
والد مرزا بشیر الدین محمود
والدہ سیدہ مریم بیگم
پیدائش 18 دسمبر 1928 (1928-12-18)قادیان، برطانوی ہند کے صوبے اور علاقے
وفات اپریل 19، 2003 (عمر 74 سال)لندن، انگلستان
تدفین اسلام آباد، ٹلفورڈ، انگلستان

خاندانی پس منظر[ترمیم]

مرزا طاہر احمد صاحب جماعت احمدیہ کے بانی مرزا غلام احمد صاحب کے بیٹے مرزا بشیر محمود احمد صاحب کے ہاں قادیان میں پیدا ہوئے۔ والدہ کا نام سیدہ مریم بیگم تھا جو ان کی نسبت سے ام طاہر کی کنیت سے مشہور ہوئیں۔

تعلیم[ترمیم]

ابتدائی تعلیم قادیان ہی میں حاصل کی۔ گریجویشن کے بعد انہوں نے ربوہ میں قائم جماعت احمدیہ کی نظریاتی درسگاہ جامعہ احمدیہ سے ’شاہد‘ کی سند حاصل کی۔ ازاں بعد انہوں نے ڈھائی برس تک لندن، میں انگریزی زبان کی تعلیم حاصل کی۔

خدمات[ترمیم]

اکتوبر انیس سو اٹھاون میں وہ اپنی جماعت کے ادارے ’وقف جدید‘ کے سربراہ بنے اور اینس سو ساٹھ سے انیس سو انہتر تک وہ پہلے مجلس خدام الاحمدیہ کے نائب صدر اور پھر صدر رہے۔انیس سو اناسی سے انیسو سو بیاسی تک وہ ’مجلس انصاراللہ‘ کے صدر رہے اور انہوں نے جماعت کے ایک اور ادارے فضل عمر فاونڈیشن کے سربراہ کی حیثیت سے بھی خدمات سرانجام دیں۔

خلافت[ترمیم]

جماعت احمدیہ کے تیسرے خلیفہ حافظ مرزا ناصر احمد صاحب کے انتقال کے اگلے روز یعنی نو جون انیس سو بیاسی کو جماعت کے چوتھے خلیفہ منتخب ہوئے ۔

وفات[ترمیم]

19 اپریل2003ء کو لندن میں وفات ہوئی۔

تصانیف[ترمیم]

  1. خطبات طاہر
  2. الہام، عقل، علم اور سچائی
  3. سوانح فضل عمر
  4. مذہب کے نام پر خون

حوالہ جات[ترمیم]