پریش راول

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
پریش راول
Paresh Rawal
پریش راول
پریش راول

معلومات شخصیت
پیدائش 30 مئی 1950 (68 سال)[1]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
ممبئی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
قومیت بھارت
جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں سیاسی جماعت کی رکنیت (P102) ویکی ڈیٹا پر
زوجہ سواروپ سمپت
عملی زندگی
مادر علمی این ایم کالج
پیشہ اداکار: فلم اور اسٹیج
پروڈیوسر: فلم اور ٹیلی ویژن
سیاستدان
پیشہ ورانہ زبان ہندی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں زبانیں (P1412) ویکی ڈیٹا پر
دور فعالیت 1984–تاحال
تنظیم بالی وڈ
اعزازات
پدم شری اعزاز
نیشنل فلم ایوارڈز
ویب سائٹ
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں آئی ایم ڈی  بی - آئی ڈی (P345) ویکی ڈیٹا پر

پریش راول (گجراتی: પરેશ રાવલ پیدائش مئی 1950ء ) ہندی فلموں کے ایک اداکار ہیں۔ 2014ء میں انہیں پدم شری سے نوازا گیا، 1994ء میں فلم سر کے لیے انہیں نیشنل فلم ایوارڈ بہترین معاون اداکار اور بہترین ویلن کا فلم فئیر ایوارڈ سے نوازا۔ اس کے علاوہ انہیں فلم پیرا پھیری اور آوارہ پاگل دیوانہ کے لیے بہترین مزاحیہ اداکار کا فلم فیئر ایوارڈ بھی مل چکا ہے۔ ان کے کیرئیر کی اہم فلم اس کیتن مہتا کی فلم سردار تھی جس میں وہ آزادی کے مجاہد ولبھ بھائی پٹیل کی مرکزی کردار میں نظر آئے تھے۔

ذاتی زندگی[ترمیم]

گجرات سے تعلق رکھنے والے پریش راول 30 مئی 1950ء کو ہندوستانی شہر ممبئی میں پیدا ہوئے۔، ان کی شادی اداکارہ اور 1979ء میں مس انڈیا بنی سوروپ سمپت کے ساتھ ہوئی۔ ان كے دو بچے آدتیہ اور انیرودھ ہیں۔

اداکاری[ترمیم]

اپنی منفرد اداکاری سے فلم بینوں کے چہروں پرمسکراہٹیں بکھیرنے والے اداکار پریش راول نے نے 1984ء میں فلم ہولی سے میں ایک معاون کردار کے طور پر اپنے کریئر کا آغاز کیا لیکن انہیں شہرت 1986ء میں بننے والی فلم 'نام' سے ملی۔ اس کے بعد وہ 1980ء سے 1990ء کے وسط 100 سے زائد فلموں میں ویلن کے کردار میں نظر آئے۔ اس میں قبضہ، کنگ انکل، رام لكھن، دوڑ ،بازی اور کئی دیگر فلموں مشہور ہیں۔

90ء کی دہائی میں ’وہ چھوکری‘ کے لیے جب پریش راول نے نیشنل ایوارڈ جیتا تو سب کی نظروں میں آ گئے۔ 90ء کی دہائی کی ساری بڑی فلموں کی کاسٹ میں پریش راول کا نام شامل ہوتا تھا۔

1994ء میں وہ یہ ایک مزاحیہ فلم انداز اپنا اپنا میں پہلی بار دوہرے کردار میں نظر آئے۔ اس کے بعد ہیرو نمبر ون، چاچی 420، بڑے میاں چھوٹے میاں، تمنا وغیرہ ان کی اہم فلمیں بنیں۔ سال 2000ء میں ریلیز ہونے والی فلم 'ہیرا پھیری' نے ان کے فلمی کریئر کو ایک نیا موڑ دیا، پریش نے بابو راؤ کا کردار کچھ اس انداز سے نبھایا کہ یہ ان کی پہچان ہی بن گیا۔ اس میں ان کے کام کے لیے وہ فلم فیئر ایوارڈ (بہترین مزاحیہ ادااکار) بھی جیت چکے ہیں۔ ان بابراو کا کردار اس کے دوسرے حصہ پھر ہیرا پھیری (2006ء) میں بھی دیکھنے کو ملا، یہ فلم بھی کامیاب رہی۔ اس کے علاوہ انہوں نے نائیک، یہ تیراگھر یہ میراگھر،آوارہ پاگل دیوانہ، چور مچائے شور، فن ٹوش، ہلچل، مالامال ویکلی، چھپ چھپ کے، ڈھونڈتے رہ جاؤ گے اور ممبئی میری جان سمیت کئی فلموں میں اداکاری کے جوہر دکھائے۔

نئی صدی میں بھی ان کا جلوہ کم نہیں ہوا ہے۔ ’او مائی گاڈ‘، چینی کم، اوئے لکی لکی اوئے اس کی مثال ہیں۔

سیاست مجھے شراکت[ترمیم]

بالی وڈ اداکار پریش راول بھارتیہ جنتا پارٹی کے سیاست دان بھی ہیں۔ و ہ احمد آباد (ایسٹ ) سے بی جے پی ٹکٹ پر کامیاب ہوئے ہیں اور فی الحال احمد آباد سابق پارلیمانی حلقہ سے موجودہ ایم پی ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. اجازت نامہ: سی سی زیرو
  2. Asira Tarannum, TNN 2 August 2011, 03.14pm IST. (2 August 2011)۔ "'Star kids are not good actors' - Times Of India"۔ Articles.timesofindia.indiatimes.com۔ اخذ کردہ بتاریخ 1 January 2013۔ 

بیرونی روابط[ترمیم]