دریائے گوداوری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
گوداوری Godavari (గోదావరి)
The Mouth of the Godavari river (East) emptying into the Bay of Bengal.
ممالک India, India
ریاستیں مہاراشٹر, آندھرا پردیش
خطہ South India
معاون ندیاں
 - بائیں Indravati, Pranahita, Wainganga, Wardha, Manjira, Kinnerasani, Sileru, Sabari, Bindusara, Moosi, Taliperu
شہر Rajamundry
ماخذ
 - محل وقوع Brahmagiri Mountain,Tryambakeshwar, ناسک, مہاراشٹر, India
 - بلندی
دہانہ
 - محل وقوع Antarvedi into Bay of Bengal, East Godavari, آندھرا پردیش, India
 - بلندی
لمبائی 1,465 کلومیٹر (910 میل)
Path of the Godavari through the South Indian Peninsula
Path of the Godavari through the South Indian Peninsula

دریائے گوداوری : (مراٹھی : गोदावरी, تیلگو గోదావరి) : جنوبی ہندوستان کا ایک اہم دریا ہے۔ یہ مغرب سے نکل کر مشرق کی طرف بہتا ہے۔ اور اس کا بیسن بہت ہی بڑا مانا جاتا ہے۔ یہ دریا مہاراشٹر ریاست کے ضلع ناشک کا علاقہ ترمبک سے نکلتا ہے، اور سطح مرتفع دکن سے گذر کر، آندھرا پردیش کے مشرقی گوداوری ضلع میں راجمنڈری کے پاس خلیج بنگال میں جا ملتا ہے۔ [1]

جغرافیہ[ترمیم]

دریائے گوداوری، وسطی بھارت کا ایک اہم آبی ذریعہ ہے۔ ریاست مہاراشٹر کی مغربی گھاٹی میں، ضلع ناشک کے ترمبکیشور (ترمبک) کے آس پاس سے نکلتا ہے۔ مشرق کی جانب، سطح مرتفع دکن سے گذرتا ہے۔ یہ دریا بھارت کا سب سے بڑا دوسرا دریا ہے۔ اس کو دکشن گنگا (جنوبی گنگا) بھی کہا جاتا ہے۔ یہ دریا آندھرا پردیش میں، نظام آباد ضلع کے کندُکُرتی گاؤں سے داخل ہوتا ہے، سطح مرتفع دکن سے گذرتا ہوا، جبوب مشرق کی طرف بہتا ہوا، خلیج بنگال میں جا ملتا ہے۔ [2]

دریا کے کنارے بسے شہر اور گاؤں[ترمیم]

مہاراشٹر میں:

آندھرا پردیش میں:

باندھ اور پُل[ترمیم]

  • آندھرا پردیش کے مشرقی گوداوری ضلع کے دھولیشورم کے پاس ایک بیریج 1852 میں باندھا گیا۔
  • اضلاع نظام آباد اور عادل آباد کی سرحدوں میں سری رام ساگر کے نام سے ایک ڈیم ہے۔
  • ترمبکیشور، مہاراشٹر کے پاس ایک پُل باندھا گیا۔
  • یکلہارا، مہاراشٹر کے پاس ایک پروجکٹ۔
  • پیتھانی، مہاراشٹر کے پاس ‘جیکواڑی ڈیم‘۔


راجمنڈری اور کوور کے درمیان ایک ریلوے پُل۔

دہدہ زیب علاقے[ترمیم]

بھدراچلم سے بہتی دریائے گوداوری کا ایک منظر.

بھارت کے عام دریاؤں کی طرح دریائے گوداوری کے کنارے بھی کئی شہر بسے ہیں، بالخصوص ہندو دھرم کے کئی مقدس مقامات ہیں۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ "River Godavari". rainwaterharvesting.org. http://www.rainwaterharvesting.org/Crisis/river-godavari.htm. Retrieved 2006-11-12. 
  2. ^ "Ponnaiyar". Person uknown. http://www.whereincity.com/india/tamilnadu/rivers.php. Retrieved 2006-12-09. 

بیرونی روابط[ترمیم]