ابو العباس النباتی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ابو العباس النباتی
معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1166  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
اشبیلیہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات سنہ 1239 (72–73 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
اشبیلیہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
شہریت خلافت  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
پیشہ ماہر نباتیات،ماہرِ دوا سازی،الٰہیات دان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ ورانہ زبان عربی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں زبانیں (P1412) ویکی ڈیٹا پر
شعبۂ عمل نباتیات، سائنسدان، Pharmacist، Jurist

ابو العباس احمد بن محمد بن مفرج بن ابی الخلیل الاموی الاشبیلی الاندلسی، محدث، حدیث کے مشہور عالم، علمِ نبات اور ادویہ کے معروف سائنسدان تھے، اشبیلیہ میں 561 ہجری کو پیدا ہوئے، حدیث سننے اور مختلف النوع پودوں پر تجربات اور انہیں جمع کرنے کے شوق نے انہیں سفر کرنے پر اکسایا، پورا اندلس گھومنے کے بعد مشرق کی طرف رخ کیا اور 613 ہجری کو مصر پہنچے اور کچھ عرصہ وہیں رہے، پھر دو سال تک شام، عراق اور حجاز گھومے، اس دوران ان کے پودوں اور حدیث میں خوب اضافہ ہوا، دوبارہ مصر لوٹے، مصر کے شاہ عادل الایوبی نے ان کا اکرام کیا اور ماہانہ تنخواہ مقرر کی اور انہیں ہمیشہ کے لیے مصر میں رہنے کے لیے کہا، مگر انہوں نے اپنے وطن اشبیلیہ جانے کو ترجیح دی اور وفات ربیع الثانی 637 ہجری تک وہیں رہے .

تصانیف[ترمیم]

ابن الرومیہ نے علم نبات، ادویہ اور علمِ حدیث پر جلیل القدر تصانیف چھوڑیں جن میں قابلِ ذکر علمی تصانیف یہ ہیں :

  • تفسیر الادویہ المفردہ من کتاب دیسقوریدس
  • ادویہ جالینوس
  • الرحلہ النباتیہ
  • المستدرکہ، ترکیب الادویہ

اس کے علاوہ اس موضوع پر ان کی بے شمار تفاسیر وتشریحات ہیں اور حروفِ تہجی کے اعتبار سے پودوں کے نام پر ایک کتاب بھی ہے، جبکہ علمِ حدیث میں ان کی کچھ تصانیف یہ ہیں :

  • المعلم بما زادہ البخاری علی مسلم
  • نظم الدراری فی ما تفرد بہ مسلم عن البخاری
  • مختصر الکامل
  • توہین طرق حدیث الاربعین

حوالہ جات[ترمیم]