تیتوس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
تیتوس
(لاطینی میں: Titus Flavius Vespasianusخاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقامی زبان میں نام (P1559) ویکی ڈیٹا پر
تیتوس

دور حکومت 23 جون 79 – 13 ستمبر 81
معلومات شخصیت
پیدائش 30 دسمبر 39  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
روم  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات 13 ستمبر 81 (42 سال)[1][2]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
مدفن روم  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام دفن (P119) ویکی ڈیٹا پر
شہریت قدیم روم  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
والد ویسپازیان[1][2]  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں والد (P22) ویکی ڈیٹا پر
بہن/بھائی
خاندان فلاویان خاندان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں خاندان (P53) ویکی ڈیٹا پر
نسل Julia Flavia
خاندان فلاویان خاندان
دیگر معلومات
پیشہ سیاست دان،عسکری افراد کار  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر

تیتوس (لاطینی زبان: Titus Flāvius Caesar Vespasiānus Augustus) (پیدائش: 30 دسمبر 39ء– وفات: 13 ستمبر 81ء) رومی شہنشاہ تھا۔ تاریخ روم میں تیتوس کی اہمیت اِس لیے زیادہ ہے کہ اُس کے زمانہ حکومت میں ہیکل سلیمانی منہدم ہوا اور یہودیوں کو جلاوطن کیا گیا۔ 79ء میں ایک آتش فشاں کے باعث ہلاکتیں ہوئیں اور کولوزیئم کی تعمیر مکمل ہوئی۔

یروشلم کی جنگیں[ترمیم]

جب یہودیوں نے سلطنت روم کے لیے مشکلات پیش کیں تو روم کے اس وقت بادشاہ ویلاسپیسس نے اپنے بیٹے ٹائٹس کو جنگ میں بھیجا۔ 3 مختلف جنگون کے بعدانہوں نے سن 76ء میں اسرائیل کو تباہ کر دیا اور یہودیوں کو زیدہ تر جلاوطن کر دیا۔

  1. ^ 1.0 1.1 عنوان : Titus, Flavius Sabinus Vespasianus — شائع شدہ از: 1911 Encyclopædia Britannica
  2. ^ 2.0 2.1 عنوان : Тит Флавий Веспасиан — شائع شدہ از: Brockhaus and Efron Encyclopedic Dictionary. Volume XXXIII, 1901