گاندھی اسٹیڈیم

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
گاندھی اسٹیڈیم
Gandhi Stadium
Burlton Park
BS Bedi Stadium
Gandhi stadium.jpg
میدان کی معلومات
مقام جالندھر، پنجاب
جغرافیائی متناسق نظام 31°20′41″N 75°33′38.07″E / 31.34472°N 75.5605750°E / 31.34472; 75.5605750متناسقات: 31°20′41″N 75°33′38.07″E / 31.34472°N 75.5605750°E / 31.34472; 75.5605750
گنجائش 16,000
اینڈ نیم
Pavilion End
Stadium End
بین الاقوامی معلومات
واحد ٹیسٹ 24 ستمبر 1983:
 بھارت بمقابلہ  پاکستان
پہلا ایک روزہ 20 دسمبر 1981:
 بھارت بمقابلہ  انگلستان
آخری ایک روزہ 20 فروری 1994:
 بھارت بمقابلہ  سری لنکا
ٹیم کی معلومات
پنجاب (1952–2000)
North Zone (1961–1979)
بمطابق 16 دسمبر 2007
ماخذ: http://www.cricketarchive.com/Archive/Grounds/14/1052.html کرکٹ ارکیو

گاندھی اسٹیڈیم (پنجابی: ਗਾਂਧੀ ਸਟੇਡਿਯਮ) یا Burlton Park یا B.S.Bedi Stadium جو جالندھر، پنجاب میں واقع ہے اور کرکٹ کے لیے استعمال ہوتا ہے۔[1]

تاریخ[ترمیم]

اس کی تعمیر 1955ء میں ہوئی اور دو ہندوستانی ڈومیسٹک کرکٹ ٹیموں کے لیے ہوم گراؤنڈ کا کام کرتا ہے: پنجاب اور شمالی زون۔ اسٹیڈیم نے ایک انفرادی ٹیسٹ کرکٹ میچ کی میزبانی کی۔ بمقابلہپاکستان قومی کرکٹ ٹیم اس کے ساتھ ساتھ، میزبان ٹیم کے ساتھ3 ایک روزہ بین الاقوامیبھارت قومی کرکٹ ٹیم نے صرف ایک روزہ، ایک میچ جیتا۔

چندی گڑھ سے باہر وہالی کرکٹ سٹیڈیم کی تعمیر کی وجہ سے، اس کا امکان کم ہے کہ پنجاب کی ریاست میں دوسرے اسٹیڈیموں کو بین الاقوامی کرکٹ میچوں کی میزبانی کرنے کا موقع ملے گا۔ ٹیسٹ کرکٹ میں سب سے زیادہ سکور پاکستان کے خلاف 374 دوڑیں، بھارت کی طرف سے بنایا گیا۔ سب سے زیادہ دوڑیں انوشمن گایکواڑ (201 دوڑیں)، وسیم راجہ (125 دوڑیں) اور جاوید میانداد (66 دوڑیں) بنائے۔ سب سے زیادہ ووکٹیں وسیم راجہ اور کپیل دیو (4 ووکٹیں) اور راوی شاستری (3 ووکٹیں) حاصل کیں۔ ایک روزہ کرکٹ میں سب سے زیادہ اسکور پاکستان کے خلاف 226 دوڑیں، ویسٹ انڈیز کی طرف سے بنایا گیا۔ سب سے زیادہ دوڑیں دلیپ ونگسرکار (88 دوڑیں)، Richie Richardson (77 دوڑیں) اور عامر ملک (77 دوڑیں) نے بنائے۔ سب سے زیادہ ووکٹیں سے Venkatapathy Raju (3 ووکٹوں سے )، Graham Gooch (2 ووکٹیں) اور کپیل دیو (2 ووکٹیں) نے حاصل کیں۔

مسماری اور تعمیر نو[ترمیم]

اس وقت، جالندھر شہر میں ایک اسپورٹس کمپلیکس کی تعمیر کے لیے ایک منصوبہ ہے۔ اس کرکٹ گراؤنڈ کی تعمیر نو اور بین الاقوامی سطح کے کرکٹ اسٹیڈیم میں تبدیلی بھی اس منصوبے میں شامل ہے۔ تمام سٹینڈ کو منہدم کیا گیا تھا، تاہم کچھ قانونی مسائل کی وجہ سے اس منصوبے کو کچھ وقت کے لیے روک دیا گیا تھا۔ چند ماہ بعد تعیمر نو شروع کی گئی۔ مرکزی پچ بھی دوبارہ تعمیر کی جا رہی ہے، کیونکہ اسٹیڈیم فی الحال کسی میچ کی میزبانی نہیں کر رہا، تاہم نئے کھلاڑیوں کا پریکٹس سیشن بند نہیں کیا گیا۔

ٹیسٹ کرکٹ[ترمیم]

ٹیسٹ میچ کا نتیجہ: پاکستان قومی کرکٹ ٹیم (337 اور 16/0) بلا نتیجہ بھارت قومی کرکٹ ٹیم (374)

اس میدان پر اب تک صرف ایک ٹیسٹ کرکٹ میچ کھیلا گيا۔

ٹیم (ا) ٹیم (ب) فاتح فرق سال
 بھارت  پاکستان بلا نتیجہ 1983

ایک روزہ بین الاقوامی مقابلے[ترمیم]

اس میدان پر 3 ایک روزہ بین الاقوامی مقابلے ہوئے ہیں۔

ٹیم (ا) ٹیم (ب) فاتح فوق سال
 بھارت  انگلستان  بھارت 6 ووکٹوں سے 1981
 پاکستان  ویسٹ انڈیز  ویسٹ انڈیز 6 ووکٹوں سے 1983
 بھارت  سری لنکا  سری لنکا 4 ووکٹوں سے 1994

ایک روز مقابلوں کی شماریات:

طرز معلومات
کسی ٹیم کا سب سے زیادہ اسکور ویسٹ انڈیز کرکٹ ٹیم (223/5 50 اووروں میں پاکستان قومی کرکٹ ٹیم کے خلاف)
کسی ٹیم کا سب سے کم اسکور سری لنکا قومی کرکٹ ٹیم (141/6 32.5 اووروں میں بھارت قومی کرکٹ ٹیم کے خلاف)
بہترین بلے بازی Richie Richardson (77 دوڑیں پاکستان قومی کرکٹ ٹیم کے خلاف)
بہتری گیند بازی Venkatapathy Raju (3/19 سری لنکا قومی کرکٹ ٹیم کے خلاف)

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

بیرونی روابط[ترمیم]

سانچہ:List of cricket grounds in India